پی ٹی آئی رہنما محمود الرشید کے بیٹے کے خلاف پولیس اہل کاروں کے اغوا کا مقدمہ درج -
The news is by your side.

Advertisement

پی ٹی آئی رہنما محمود الرشید کے بیٹے کے خلاف پولیس اہل کاروں کے اغوا کا مقدمہ درج

لاہور: صوبائی وزیرِ ہاؤسنگ محمود الرشید کے بیٹے کے خلاف پولیس اہل کاروں کو اغوا، تشدد اور لڑائی کی دفعات کے تحت تھانہ غالب مارکیٹ میں مقدمہ درج کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب کے وزیر برائے ہاؤسنگ و شہری ترقی محمود الرشید کے بیٹے کے خلاف تھانہ غالب مارکیٹ میں پولیس اہل کاروں کے اغوا اور دیگر دفعات کے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا۔

الزامات ثابت ہوئے تو وزارت سے مستعفی ہو جاؤں گا: صوبائی وزیرِ ہاؤسنگ

مقدمے کے متن کے مطابق میاں حسن نے مبینہ طور پر اہل کاروں کو تشدد کے بعد اغوا کر لیا، ملزمان نے اہل کاروں سے اسلحہ اور وائرلیس چھین کر پھینک دیے۔ ڈی آئی جی انیسٹی گیشن کا کہنا تھا کہ ملزمان کو گرفتار کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق لاہور کے علاقے غالب مارکیٹ کے قریب پولیس نے دو کار سواروں سے تفتیش کی جن میں ایک لڑکی شامل تھی، بعد ازاں ایک کار سوار نے اپنے دوستوں کو فون کر کے بلوایا جنھوں نے پولیس اہل کاروں پر تشدد کیا اور انھیں اپنے ساتھ  لے گئے۔

میاں محمود الرشید نے ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے بیٹے کے خلاف الزامات کو من گھڑت قرار دیا، ان کا کہنا تھا کہ بیٹے کے دوستوں کی ٹی پارٹی تھی، پولیس اہل کاروں نے ان پر تشدد کیا، ایف آئی آر میں گاڑی میرے نام پر ہے جو بیٹے کو دی تھی۔


یہ بھی پڑھیں:  پی ٹی آئی رہنما ہنگورو کا ساتھیوں کے ساتھ حیدر آباد میں تھانے پر دھاوا


وزیرِ ہاؤسنگ کے مطابق پولیس نے بیٹے سے 50 ہزار روپے کا مطالبہ کیا، علی نے پولیس اہل کاروں کو 2 ہزار روپے دیے، باقی دوست آئے تو 2 پولیس اہل کار بھاگ گئے ایک پکڑ لیا گیا، پولیس اہل کاروں نے معاملہ رفع دفع کرانے کا کہا۔

پولیس نے بیٹے سے 50 ہزار روپے کا مطالبہ کیا، علی نے پولیس اہل کاروں کو 2 ہزار روپے دیے: محمود الرشید

انھوں نے مزید کہا کہ پولیس والوں نے معافی مانگی جس پر بیٹا تھانے نہیں گیا، پولیس گردی کے واقعات معمول بن گئے ہیں، پولیس کو معاملے پر سنجیدگی کا مظاہرہ کرنا چاہیے، ہماری طرف سے تفتیش میں مکمل تعاون کیا جائے گا۔

محمود الرشید بیٹے کے خلاف مقدمے پر ردِ عمل دیتے ہوئے کہا کہ بغیر تحقیق اتنی بڑی کہانی بنا کر میری نیک نامی تباہ کی گئی، بیٹے پر الزامات ثابت ہوئے تو وزارت سے مستعفی ہو جاؤں گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں