کراچی: سی ٹی ڈی کی کارروائی، ٹارگٹ کلر گروہ گرفتار، پولیس اہلکار بھی شامل Karachi
The news is by your side.

Advertisement

کراچی: سی ٹی ڈی کی کارروائی، ٹارگٹ کلر گروہ گرفتار، پولیس اہلکار بھی شامل

کراچی: کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کے اہلکاروں نے گورنگی میں کارروائی کرتے ہوئے پولیس اہلکار سمیت 5 ٹارگٹ کلرز کو گرفتار کرلیا جن کا تعلق ایم کیو ایم لندن کے ساؤتھ افریقا گروپ سے ہے۔

ایس ایس پی سی ٹی ڈی منیر شیخ کا کہنا ہے کہ حراست میں لیے جانے والے ٹارگٹ کلرز کا تعلق ایم کیو ایم لندن سے ہے، گرفتار ہونے والے ملزمان میں سے ایک رضوان نامی پولیس اہلکار جبکہ دیگر ملزمان میں کامران عرف منا، فہیم لودھی، محمد کامران عرف مولانا اور عدنان شیخ شامل ہیں۔

انہوں نے کہا کہ رضوان پولیس میں بھرتی ہونے سے قبل ایم کیو ایم کی ٹارگٹ کلنگ کی ٹیم کا حصہ تھا اور ساؤتھ افریقا سیٹ اپ کے لیے کام کررہا تھا، ملزم کو ایم کیو ایم کے سیٹ اپ میں ہونے کی وجہ سے پولیس میں بھرتی کروایا گیا۔

ایس ایس پی سی ٹی ڈی کا کہنا ہے کہ ملزمان کو جنوبی افریقا کے سیٹ اپ کی جانب سے کارروائیوں کی ہدایات دی جاتی تھیں، رضوان نے دورانِ ڈیوٹی دو افراد کو قتل کیا جبکہ دیگر دو ملزمان کامران اور فہیم نے بھی جنوبی افریقا سے ملنے والی ہدایات پر جرائم کی وارداتوں کا اعتراف کیا۔

منیر شیخ کے مطابق ملزمان نے دورانِ تفتیش اہم انکشافات کیے، ایم کیو ایم افریقا سیٹ اپ چلانے والے جہانگیر بابو، آغا عدیل، رضوان قریشی اور کاشف صدیقی ہدایات دیتا تھے اور جو کارکن پارٹی کے لیے نقصان دہ ہوتا یہ لوگ اُسے قتل کردیتے تھے۔

تفتیش میں یہ بات بھی سامنے آئی کہ ملزمان نے 2015 میں زمان ٹاؤن پولیس موبائل پر فائرنگ کر کے 4 اہلکاروں کو شہید جبکہ 92 کے آپریشن میں حصہ لینے والے پولیس اہلکار حاجی ندیم کو بھی فائرنگ قتل کے قتل کیا۔

دورانِ حراست ملزمان نے 2001 میں سی ٹی ڈی اہلکار دانش پر قاتلانہ حملے اور 2007 تک اپنی ہی جماعت ایم کیو ایم کے متعدد کارکنان کو قتل کرنے کا اعتراف کیا، گرفتار ملزمان کے قبضے سے اسلحہ بھی برآمد کیا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں