The news is by your side.

Advertisement

پولیس پر مبینہ تشدد، پی ٹی آئی رکن اسمبلی نے ازخود گرفتاری دے دی

لاہور: ایس ایچ او پر تشدد کے مبینہ الزام میں نامزد تحریک انصاف کے نومنتخب رکن پنجاب اسمبلی ندیم عباس نے از خود گرفتاری دے دی۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز اطلاعات سامنے آئی تھیں کہ تحریک انصاف کے نو منتخب رکن اسمبلی اپنے حلقے میں جیت کا جشن منارہے تھے کہ وہاں پہنچ کر ایس ایچ و ہنجروال نے پی ٹی آئی رہنما اور کارکنان کو آتش بازی کرنے سے منع کیا۔

ایس ایچ او ہنجروال پولیس نفری کے ساتھ مذکورہ مقام پر فائرنگ کی اطلاعات موصول ہونے کے بعد پہنچے تھے، انہوں نے جیسے ہی شرکاء کو روکنے کی کوشش کی تو اسی دوران نامعلوم افراد نے اُن پر حملہ کردیا تھا جس کے نتیجے میں ایس ایچ او اور پولیس کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور اُن کی وردیاں بھی پھاڑ دی تھی۔

تحریک انصاف کے نومنتخب رکن پنجاب اسمبلی پر الزام عائد کیا گیا تھا کہ پولیس پر تشدد اُن کی ہدایت پر کیا گیا البتہ ندیم عباس نے اپنے اوپر عائد ہونے والے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے خود کو قانون کے سامنے پیش کیا اور ازخود گرفتاری دے دی۔

قبل ازیں چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے پولیس افسر پر ہونے والے تشدد کا نوٹس لے کر آئی جی پنجاب کو ہر صورت ملزم کی گرفتاری کا حکم جاری کیا تھا۔

واضح رہے کہ ندیم عباس پنجاب اسمبلی کی نشست پی پی 161 سے منتخب ہوئے ہیں۔ 


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں