اسلام آباد : اعلیٰ افسران کی عجب منطق، بچی کو انسدادپولیو کے قطرے پلانے والا افسر برطرف -
The news is by your side.

Advertisement

اسلام آباد : اعلیٰ افسران کی عجب منطق، بچی کو انسدادپولیو کے قطرے پلانے والا افسر برطرف

اسلام آباد : اعلیٰ افسران کی عجب منطق انسداد پولیو کے قطرے پلانے والے افسر کو برطرف کردیا، اسسٹنٹ کمشنر نے ڈائریکٹر ایکسائز کے خاوند کے منع کرنے کے باوجود انکی بیٹی کو انسدادپولیو کے قطرے پلائے تھے۔

اسلام آباد میں پولیو کے قطرے پلانے کے معاملے پر اسلام آباد انتظامیہ کے اعلی افسران میں ٹھن گئی، پولیو کے قطرے پلانے سے انکار والے کے خلاف قانونی کارروائی کی بجائے چیف کمشنر نے اپنے ہی آفیسر کو برطرف کردیا۔

اے آر وائی نیوز کو موصول دستاویز کے مطابق اسلام آباد میں ڈائریکٹرایکسائز مریم ممتاز کے خاوند نے اپنی بچی کو انسداد پولیو کے قطرے پلانے سے انکار کیا لیکن اسسٹنٹ کمشنر سٹی علی اصغر نے انسدادپولیو کے قطرےپلا دیے، بات نہ مانی گئی تو مریم ممتاز کے خاوند کو غصہ آگیا اور اسسٹنٹ کمشنر پر چڑھائی کردی اور کہا تمہاری جرات کیسے ہوئے میری بیٹی کو قطرے پلاؤ،تم جانتے ہو میں کون ہوں؟

واقعہ کا علم مریم ممتاز کو ہوا تو انہوں نے اسسٹنٹ کمشنر کو فون پر کھری کھری سنائی اور پھر چیف کمشنر کو شکایت لگادی۔

چیف کمشنر کے جواب طلب کرنے پر اسسٹنٹ کمشنر نے تحریری جواب میں کہا غلطی نہ ہونے کے باوجود معافی مانگنے کو تیار ہوں، چیف کمشنر ذوالفقار حیدر نے ایک نہ سنی اور علی اصغر کو عہدے سے فارغ کرکے انکی خدمات اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کے سپرد کردیں۔

مریم ممتاز ڈائریکٹر ایکسائز چیف کمشنر کے فیصلے سے انتظامیہ کے افسران میں شدید بے چینی پھیل گئ پولیو کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والوں کے خلاف مقدمات درج کرنے کا فیصلہ بھی ہوا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں