The news is by your side.

Advertisement

فضائی آلودگی ملازمین کی کارکردگی میں کمی کا سبب

فضائی آلودگی یوں تو انسانی صحت پر بے حد مضر اثرات ڈالتی ہے لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ یہ مختلف شعبوں سے منسلک ملازمین کی صحت کو خاص طور پر متاثر کرتی ہے اور ان کی کام کرنے کی استعداد میں کمی کرتی ہے؟

چین میں ماہرین کی جانب سے کی جانے والی ایک تحقیق کے مطابق فضائی آلودگی ان لوگوں پر خاص طور پر منفی اثرات ڈالتی ہے جو کھلی فضا میں کام کرتے ہیں جیسے مزدور اور کسان وغیرہ۔ ان کا کہنا ہے کہ یہ کھلی فضا میں کام کرنے والے افراد کی استعداد کو متاثر کرتی ہے اور ان کی کارکردگی میں کمی واقع ہوجاتی ہے۔

مزید پڑھیں: بدترین فضائی آلودگی کا شکار 10 ممالک

ماہرین کے مطابق اس کا تعلق فضا میں موجود مضر صحت اثرات کا سانس اور خون پر منفی طور سے اثر انداز ہونا ہے۔ فضا میں موجود مختلف زہریلے عناصر اور گیسیں لوگوں کو سانس لینے میں مشکلات کا شکار کرتی ہے۔

یہ عناصر سانس کے ساتھ خون میں بھی شامل ہوجاتے ہیں جس کے بعد جسم میں خون کی روانی دھیمی ہوجاتی ہے یوں انسان اپنے آپ کو سست اور تھکا ہوا محسوس کرتا ہے۔

مزید پڑھیں: آبی آلودگی سے دنیا بھر کی آبادی طبی خطرات کا شکار

اس سے قبل ایک اور تحقیق میں بتایا گیا تھا کہ فضائی آلودگی انسانی دماغ پر اثر انداز ہوتی ہے اور یہ مختلف دماغی بیماریوں جیسے الزائمر وغیرہ کا سبب بن سکتی ہے۔ ریسرچ کے مطابق ایک دماغی اسکین میں فضا میں موجود آلودہ ذرات دماغ کے ٹشوز میں پائے گئے تھے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ فضا میں موجود مضر صحت ذرات جیسے آئرن آکسائیڈ الزائمر کی نشونما اور اس میں اضافہ کا سبب بن سکتے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں