The news is by your side.

Advertisement

سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو نے دیکھنے والوں کو رُلا دیا

غربت انسان کو کہیں کا نہیں چھوڑتی، کم آمدنی والے افراد بے بس ہیں کہ اس مہنگائی کے دور میں وہ اپنے بچوں کی بنیادی ضروریات کیسے پوری کریں۔

مہنگائی کے اس دور میں اشیائے ضروریہ تک عوام کی رسائی مشکل ترین ہوتی جا رہی ہے، کھانے پینے کی عام چیزوں کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگی ہیں۔

محدود آمدنی رکھنے والا شہری اپنے اہل خانہ کا پیٹ پالنے کیلئے دن بھر کمانے کے باوجود اس پریشانی میں مبتلا ہے کہ شام کو گھر جاکر اپنے بچوں کو پیٹ بھر کر روٹی کھلا بھی سکے گا یا نہیں؟َ

مہنگائی اور بے روزگاری سے لوگوں میں احساس محرومی جنم لے رہا ہے، لوگ ذہنی بیمار ہوتے جا رہے ہیں ان کی سمجھ میں نہیں آرہا کہ جائیں تو کہاں جائیں۔

ان ہی مسائل سے نبرد آزما یہ غریب شخص بھی ہے جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے، صارفین اس شخص کو بے بسی سے روتا ہوا دیکھ کر خود بھی آبدیدہ ہوگئے۔

فوٹوگرافر اور ڈیجیٹل مواد کے تخلیق کار آصف خان نے انسٹاگرام پر ایک دل دہلا دینے والی ویڈیو شیئر کی جسے دیکھ کر آپ کے بھی آنسو نکل آئیں گے۔

چند سیکنڈ پر مبنی یہ خاموش ویڈیو ہمارے معاشرے کی منہ بولتی تصویر ہے کہ غربت انسان کو اتنا مجبور اور لاچار کردیتی ہے کہ اس کے پاس رونے کے سوا کوئی چارہ نہیں ہوتا۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی اس ویڈیو میں دکھایا گیا ہے کہ ایک شخص سڑک پر بچوں کیلیے میٹھی چیز بیچتے ہوئے پھوٹ پھوٹ کر روپڑا اور خود ہی اپنے آنسو پوچھ رہا ہے کیونکہ اس کے دکھوں کا مداوا کرنے والا بھی کوئی نہیں۔

اس دردناک ویڈیو کو6 ملین سے زیادہ بار دیکھا گیا ہے اور صارفین نے اپنے کمنٹس میں افسردگی کے ساتھ اس سے دلی ہمدردی کا اظہار کیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں