The news is by your side.

Advertisement

پورٹ قاسم ورکرز کی گورنر ہاوس کی جانب پیش قدمی، پولیس کا لاٹھی چارج

کراچی : پورٹ قاسم کے ڈاک ورکرز نے گورنر ہاوس جانے کی کوشش کی جس پر پولیس نے مظاہرین کو روکنے کےلیے آنسو گیس کے شیل فائر کیے۔

تفصیلات کے مطابق پورٹ قاسم کے ڈاک ورکرز کی نے نوکریوں سے برطرفی اور تنخواہوں کی عدم ادائیگی پر گذشتہ پانچ ماہ سے کراچی پریس کلب کے سامنے احتجاجی دھرنا دیا ہوا تھا، آج مظاہرین نے گورنر ہاوس کی جانب پیش قدمی کی۔

پولیس نے مظاہرین کو ریڈ زون میں داخل ہونے سے روکنے کےلیے واٹر کینن کا آزادنہ استعمال، لاٹھی چارج اور آنسو گیس کے شیل فائر کیے۔

میڈیا رپورٹس کا کہنا ہے کہ مظاہرین فوارہ چوک پہنچنے کی کوشش کررہے تھے، پولیس اہلکاروں نے دس سے زائد مظاہرین کو حراست میں بھی لے کر زینب مارکیٹ اور پریس کلب کے راستے بند کردئیے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق نوکریوں سے برطرفی اور تنخواہیں نہ ملنے کے خلاف احتجاج کرنے والے دو سے زائد افراد کی پولیس تشدد کے باعث حالت غیر ہے جنہیں طبی امداد کے لیے قریبی اسپتال منتقل کردیا ہے۔

میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ 100 سے 200 کے قریب افراد اب بھی زینب مارکیٹ کے اطراف میں موجود ہیں۔

خیال رہے کہ وزیر اعظم عمران خان ایک روزہ دورے پر کراچی آئے ہوئے ہیں اور گورنر ہاوس میں وفود سے ملاقاتیں کررہے ہیں۔

پورٹ قاسم ڈاک ورکرز کو ریڈ زون میں داخل ہونے سے روکنے کے لیے پولیس کے ساتھ ساتھ رینجرز کی بھاری نفری بھی پریس کلب پہنچ چکی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں