The news is by your side.

Advertisement

پاناما ہنگامہ، اے آر وائی کے پروگرام پاورپلے کے میزبان ارشد شریف کے انکشافات

اسلام آباد : وزیراعظم نواز شریف کے سعودی عرب کے الراجی بینک میں اکاؤنٹ ہے جس میں انہوں نے 7 لاکھ ریال حسین نواز کے لیے منتقل کیے ہیں جب کہ بھیجے ہیں نے کہا ہے کہ شریف خاندان نےسعید احمد کے اکاؤنٹ میں لاکھوں ڈالر منتقل کیے۔

یہ انکشافات اے آئی آر نیوز کے معروف ٹاک شو پاور پلے کے میزبان ارشد شریف نے سپریم کورٹ میں پیش کی گئی پاناما جے آئی ٹی رپورٹ کا جائزہ لیتے ہوئے کہی انہوں نے مزید بتایا کہ وزیراعظم نوازشریف کا جدہ کے الراجی بینک میں اکاؤنٹ تھا جس میں انہوں نے 7 لاکھ ریال منتقل کیے ہیں۔

ارشد شریف کا کہنا تھا کہ شریف خاندان برطانیہ میں بھی ٹیکس بچاتا رہا ہے جب کہ حسن نواز نے جے آئی ٹی کے سامنے دہری شہریت کا اعتراف
کرتے ہوئے جے آئی ٹی کے سامنے کہا کہ میں برطانوی شہری ہوں اور یہ تاثر بھی غلط ہے کہ ٹیکس بچانے کیلئے آف شور کمپنی کا بینیفشری بنا۔

پاور پلے کے میزبان ارشد شریف نے انکشاف کیا کہ شریف خاندان نے نیشنل بینک کے صدر سعید احمد کے اکاؤنٹ میں لاکھوں ڈالر منتقل کیے ہیں جس کی انہوں نے خود تصدیق کی ہے جب کہ شیمروک کمپنی میں نوازشریف، اسحاق ڈار اور سعید احمد کا تعلق بھی سامنے آیا ہے۔

ارشد شریف نے منروا، مریم ، حسن اور حسین نواز کے درمیان فنانشل ڈیلنگ کا انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ جے آئی ٹی نے شریف خاندان کو حقیقی اور متصدقہ کاغذات دکھائے اور برٹش ورجن آئی لینڈ سے شریف خاندان کی فنانشل ڈیلنگ کی تصدیق بھی کی گئی۔

پروگرام پاور پلے میں انکشاف کیا گیا مریم نواز کا دسمبر2005 سے منروا سروسزسےتعلق ہے جس سے عدم تعلق ثابت کرنے کے لیے جھوٹی دستاویزات جمع کرائیں جب کہ حسن نوازکی کمپنیوں کو 2002 تا 2008 لاکھوں پاؤنڈزخسارے میں دکھایا گیا اور حسن نواز نے 2002 تا 2008 لاکھوں پاؤنڈز کا قرضہ ظاہرکیا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں