لگتا ہے، کوئی سسٹم انتخابات کو التوا میں ڈال رہا ہے: اعتراز احسن ppp
The news is by your side.

Advertisement

لگتا ہے، کوئی سسٹم انتخابات کو التوا میں ڈال رہا ہے: اعتراز احسن

بلوچستان اسمبلی نے عجلت میں الیکشن کے التواکی قرارداد منظور کی

کراچی: پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما اعتراز احسن نے کہا ہے کہ ایسا لگتا ہے، کوئی سسٹم انتخابات کو التوا میں ڈال رہا ہے.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے پیپلزپارٹی کے رہنماؤں کے ساتھ پریس کانفرس کرتے ہوئے کیا، ان کا کہنا تھا کہ فاٹا انضمام کی وجہ سے الیکشن ایک سال کے لیے ملتوی ہوسکتے ہیں.

پیپلزپارٹی الیکشن کے تاخیر کے حق میں نہیں ہے، آصف زرداری اوربلاول چاہتے ہیں انتخابات وقت پر ہوں

اعتراز احسن

اعتراز احسن کا کہنا تھا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے 12 اضلاع کی حلقہ بندیاں روک دیں، حلقہ بندیاں دوبارہ ہوئیں تو دوبارہ اعتراضات کی گنجائش ہوگی، نئی حلقہ بندیاں ہوئیں، تو لوگوں کو ان پر بھی اعتراض ہوسکتا ہے.

ان کا کہنا تھا کہ کوئی سسٹم انتخابات کو التوا میں ڈال رہا ہے، عام انتخابات مقررہ تاریخ پر ہونے چاہییں، کل سے فارم وصول نہ کئے گئے، تو نئے فارم چھپیں گے، فارم چھپنےمیں جو وقت درکار ہے، ممکنہ طور پر الیکشن میں تاخیرہوسکتی ہے .

اعتزاز احسن نے کہا کہ پیپلزپارٹی الیکشن میں تاخیر کے حق میں نہیں، آصف زرداری اوربلاول چاہتے ہیں کہ انتخابات وقت پرہوں، خواہش ہے کہ انتخابات 25جولائی 2018 ہی کو ہوں.

انھوں‌ نے کہا کہ کاغذات نامزدگی فارم کے مسترد ہونے پرتشویش ہے، کاغذات نامزدگی سے متعلق فیصلہ ہمارے پاس نہیں آیا، نئے کاغذات نامزدگی فارم کی منظوری پارلیمنٹ نے دی ہے، ہم نہیں سمجھتے کہ عدالت کے حکم سےفارم کو تبدیل کیا جا سکتا ہے۔

اعتراز احسن کا کہنا تھا کہ بلوچستان اسمبلی نے عجلت میں الیکشن کے التواکی قرارداد منظور کی، عجلت میں منظورقرارداد میں حج ، گرمی، مون سون کو وجہ بنایا گیا، پرویزخٹک نے خط لکھا ہے کہ فاٹا انضمام سے کے پی الیکشن کا توازن بگڑ سکتا ہے۔


الیکشن میں ایک دن تو دُور، ایک گھنٹے کی بھی تاخیر نہیں ہونی چاہیے: نواز شریف


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں