The news is by your side.

Advertisement

نیب پیشی پر ہنگامہ آرائی، پیپلزپارٹی کے کارکنان کو رہا کرنے کا حکم

اسلام آباد: وفاقی وزیر اطلاعات نے پیپلزپارٹی کے کارکنان کی رہائی کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ پولیس پر حملہ میں ملوث افراد کے علاوہ دیگر کو فوری رہا کردیا جائے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنے ٹویٹ کے ذریعے انہوں نے آگاہ کیا کہ وزارتِ داخلہ کو نیب دفتر کے باہر سے گرفتار ہونے والے پیپلزپارٹی کے کارکنان کو رہا کرنے کی ہدایت جاری کردی۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ پولیس پر حملہ کرنے والوں کے علاوہ دیگر کو رہا کرنے کی ہدایت دی گئی ہے، پیپلزپارٹی کے رہنما تفتیش سے بچنے کے لیے ایسے اقدامات کررہے ہیں جس کی جتنی مذمت کی جائے وہ کم ہے۔

مزید پڑھیں: بلاول کی نواز شریف سےملاقات کے حقیقی رنگ سامنے آگئے ، مراد سعید

خیال رہے جعلی اکاؤنٹس کیس کی تفتیش میں سابق صدرآصف زرداری اور پیپلزپارٹی کےچیئرمین بلاول بھٹو زرداری کو نیب راولپنڈی نے طلب کیا تھا، رہنماؤں کی پیشی کے موقع پر  پی پی کے کارکنان کی ہنگامہ آرائی اورکارکنان کے پتھراو سے پانچ اہلکار زخمی ہوگئے تھے۔پولیس نے ہنگامہ آرائی کرنے والے کارکنان کو گرفتار کر کے تھانے منتقل کیا تھا۔

پی پی کے کارکنان کی ہنگامہ آرائی پر فواد چوہدری نے بیان جاری کیا تھا کہ اگر کسی نے حد عبور کرنے کی کوشش کی تو ریاست اپنی ذمہ داری پوری کرے گی۔

یہ بھی پڑھیں: کارکنوں کو رہا نہ کیا گیا تو پیپلز پارٹی انتہائی قدم اٹھائے گی: بلاول

دوسری جانب پیپلزپارٹی کے چیئرمین نے کارکنان کو رہا نہ کرنے پر انتہائی قدم اٹھانے کا عندیہ دیا تھا۔ بلاول بھٹو زرداری نے پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے نیب پر تنقید کی اور کہا تھا کہ ہم نے اپنے دورِ حکومت میں احتساب قانون میں تبدیلی نہیں کی جو ہماری بہت بڑی غلطی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں