The news is by your side.

Advertisement

آصف زرداری اور خواجہ سعد رفیق کے پروڈکشن آرڈر جاری

اسلام آباد: اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے وزارتِ قانون کی رائے کے بعد آصف زرداری اور خواجہ سعد رفیق کے پروڈکشن آرڈر جاری کردیے۔

ذرائع کے مطابق اسپیکراسدقیصرنےوزارت قانون کی رائےکےبعد پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری اور مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی خواجہ سعد رفیق کے پروڈکشن آرڈر جاری کیے۔ دونوں اراکین کل قومی اسمبلی میں ہونے والے بجٹ سیشن کے اجلاس میں شرکت کریں گے۔

نمائندہ اے آر وائی عاصم علی رانا کے مطابق علی وزیر اور محسن داوڑ کے پروڈکشن آرڈر جاری نہیں کیے گئے۔

قبل ازیں اے آر وائی نیوز کے پروگرام پاور پلے میں وفاقی وزیربرائے آبی وسائل فیصل واؤڈا کا کہنا تھا کہ جمہوریت کو پروان چڑھانے کی خاطر حکومت کل تک آصف زرداری کے پروڈکشن آرڈر جاری کردے گی۔

اُن کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کی خواہش پر آصف زرداری کے پروڈکشن آرڈر کل جاری ہوجائیں گے البتہ حیران کن بات یہ ہے کہ پروڈکشن آرڈر جاری ہونے پر بھی اپوزیشن اب خوش نہیں ہے۔

یاد رہے کہ آصف زرداری جعلی بینک اکاؤنٹس کیس اور خواجہ سعد رفیق آشیانہ ہاؤسنگ اسکیم اسکینڈل میں گرفتار ہیں۔ اپوزیشن کی جانب سے چار اراکین اسمبلی کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔

 آج ہونے والے اسمبلی اجلاس میں بلاول بھٹو زرداری نے نکتہ اعتراض پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ بجٹ سیشن بہت اہم ہوتے ہیں معاشی فیصلے لیئے جاتے ہیں، سیشن ایک ہفتے سے زیادہ سے چل رہا ہے،اس ایوان کے چار نمائندوں کو بجٹ سیشن میں نہیں آنے دیا جا رہا۔ انہوں نے اسپیکر سے مطالبہ کیا کہ خواجہ سعد رفیق، محسن داوڑ، علی وزیر اور سابق صدر آصف علی زرداری کے پروڈکشن آرڈر جاری کیے جائیں۔

یہ بھی یاد رہے کہ گزشتہ روز ایوان میں ایم کیو ایم کے اراکین نے آصف زرداری کے پروڈکشن آرڈر جاری کرنے کی حمایت کرتے ہوئے بلاول بھٹو سے ملاقات بھی کیا تھی، بعد ازاں ایم کیو ایم پاکستان کے رکن امین الحق نے اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے تین نکات بیان کیے تھے جس میں اُن کا کہنا تھا کہ پروڈکشن آرڈر جمہوریت کے فروغ، ایوان کی تاریخ اور سیاستدان کی خدمات کو مدنظر رکھتے ہوئے جاری کیے جائیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں