The news is by your side.

Advertisement

تحریک انصاف کی حکومت نے اب تک کتنا قرضہ لیا ؟ تفصیلات سامنے آگئیں

اسلام آباد : تحریک انصاف کی حکومت نے مختلف ذرائع سے دس ارب چالیس کروڑ ڈالرکا قرضہ لیا، یہ قرضہ زرمبادلہ ذخائرمیں استحکام اور پرانے قرضوں کی ادائیگی کیلئے لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق اقتصادی امور ڈویژن کے مطابق موجودہ حکومت نے اب تک دس ارب چالیس کروڑ ڈالر کے قرضے لئے، جس میں بائی لیٹرل ، ملٹی لیٹرل اور کمرشل لونز شامل ہیں۔

قومی اسمبلی میں جمع کروائے گئے اعداد و شمار کے مطابق کمرشل لونز چینی، امارتی اور یورپی بینکوں سے لئے گئے ہیں جبکہ مجموعی طور پر کمرشل بینکوں سے چار ارب اسی کروڑ ڈالر کا قرضہ لیا گیا۔

اعداد و شمار میں بتایا گیا آئی ایم ایف سے بھی قرضہ لیا گیا جبکہ چین، یواے ای اور قطر سے ملے ڈائریکٹ ڈپازٹس اس کے علاوہ ہیں، یہ قرضہ زرمبادلہ ذخائرمیں استحکام اور پرانے قرضوں کی ادائیگی کیلئے لیا گیا۔

مزید پڑھیں : حکومت نے نوازشریف کے دور میں لیا گیا بڑا قرضہ ادا کردیا

یاد ریے حکومت کی جانب سے قرضوں کی ادائیگی بھی کی جا رہی  ہے، پاکستان نے سکوک بانڈزکی مد میں لئے گئے ایک ارب ڈالر کی ادائیگی کی، یہ سکوک بانڈز گزشتہ دورِحکومت میں لئے گئے تھے اور بانڈز پر شرح سود چھ اعشاریہ سات پانچ فیصد تھی، سکوک بانڈز سال 2014 میں لئے گئے تھے، جن کی میچورٹی پانچ سال کی تھی۔

بانڈزکی مد میں کی گئی ادائیگی کے اثرات آئندہ ہفتے زرمبادلہ ذخائرکےاعدادوشمارمیں ظاہر ہوں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں