The news is by your side.

Advertisement

صدر عارف علوی نے بے نامی ٹرانزیکشن سمیت 8 آرڈیننسز کی منظوری دے دی

اسلام آباد: صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے بے نامی ٹرانزیکشن آرڈیننس سمیت 8 نئے آرڈیننسز کی منظوری دے دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق صدر مملکت نے حقوق خواتین اور وراثتی سرٹیفکیٹ آرڈیننس، لیگل اینڈ جسٹس اتھارٹی آرڈیننس اور نیب ترمیمی آرڈیننس کی منظوری دے دی۔

صدر مملکت عارف علوی نے جن دیگر آرڈیننسز کی منظوری دی ہے ان میں سپیریئر کورٹس ڈریس آرڈیننس، بے نامی ٹرانزیکشن آرڈیننس، کورٹ آف سول پروسیجر آرڈیننس، وسل بلور پروٹیکشن اینڈ ویجی لینس کمیشن آرڈیننس شامل ہیں۔

نیب ترمیمی آرڈیننس کے تحت پانچ کروڑ روپے سے زائد کرپشن کے قیدی کو جیل میں سی کلاس ملے گی، آرڈیننس فوری نافذ العمل ہو گا۔

یہ بھی پڑھیں:  وفاقی کابینہ نے نیب ترمیمی آرڈیننس کی منظوری دے دی

یاد رہے کہ 22 اکتوبر کو وزیر اعظم کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس میں نئے قوانین آرڈیننس کے ذریعے نافذ کرنے جب کہ نیب ترمیمی آرڈیننس اور بے نامی ٹرانزیکشن ایکٹ 2017 کے ترمیمی آرڈیننس کی منظوری دی گئی تھی۔

اس سے قبل ہونے والے کابینہ اجلاس میں رئیل اسٹیٹ ریگولیٹری اتھارٹی کے قیام، سی ڈی اے کی ری اسٹرکچرنگ اور سیکٹر جی 6 میں پائلٹ پروجیکٹ کے طور پر کام کی بھی منظوری دی گئی تھی، کابینہ نے لنگر خانوں کے قیام کی پالیسی کی بھی منظوری دی تھی، لنگر خانے پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے تحت چلائے جائیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں