The news is by your side.

Advertisement

ڈونلڈ ٹرمپ کا افغانستان میں تعینات امریکی فوجیوں کی تعداد آدھی کرنے کا فیصلہ

واشنگٹن : امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے افغانستان میں تعینات امریکی فوجیوں کی تعداد آدھی کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق شام سے افواج واپس بلانے کے فیصلے کے بعد امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے افغانستان میں امریکی فوجیوں کی تعداد میں کمی کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

امریکی میڈیا کے مطابق افغانستان میں امریکہ کے 14 ہزارفوجی تعینات ہیں جن میں سے 7ہزارامریکی فوجیوں کوافغانستان سے واپس بلایا جائے گا۔

امریکی میڈیا کا کہنا ہے کہ افغانستان سے 7 ہزارفوجیوں کے انخلا میں کئی ماہ لگ سکتے ہیں۔

دوسری جانب امریکا کے نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد کی افغانستان میں امن کے لیے سیاسی جماعتوں اور دیگر اسٹیک ہولڈرز سے ملاقاتوں کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

شام سے امریکی افواج کی واپسی کا عمل شروع ہوگیا‘ وائٹ ہاؤس


خیال رہے کہ گزشتہ روز وائٹ ہاؤس کا کہنا تھا کہ شام سے فوجیوں کی واپسی کا عمل شروع ہوچکا ہے، یہ عمل سو روز میں پورا کرلیا جائے گا۔

صدر ٹرمپ نے شام سے امریکی فوج واپس بلانے کا اعلان کردیا


اس سے قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ داعش کو تاریخی شکست کے بعد شام سے فوج کی واپسی کا وقت آگیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں