The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کے بعد صدر عارف علوی بھی نوجوانوں کی ترقی کے لئے میدان میں آگئے

اسلام آباد : وزیراعظم کےبعدصدر عارف علوی بھی نوجوانوں کی ترقی کےلئےمیدان میں آگئے اور آرٹیفشل انٹیلی جنس پروگرام کامیاب جوان منصوبے کے ساتھ چلانے کا فیصلہ کرلیا ہے، منصوبے کےتحت ایک لاکھ نوجوانوں کو آرٹیفشل انٹیلی جنس کی تربیت دی جاسکے گی۔

تفصیلات کے مطابق صدر مملکت عارف علوی بھی نوجوانوں کی ترقی کے لئے میدان میں آگئے ، اس سلسلے میں صدرعارف علوی سے معاون خصوصی برائےیوتھ افیئرزعثمان ڈار کی ملاقات ہوئی ، ملاقات میں آرٹیفشل انٹیلی جنس پروگرام کو کامیاب جوان منصوبے کے ساتھ چلانے کا فیصلہ کیا گیا، منصوبے کے تحت ایک لاکھ نوجوانوں کو آرٹیفشل انٹیلی جنس کی تربیت دی جاسکے گی۔

اس موقع پر صدرمملکت عارف علوی نے کہا ترقی یافتہ ممالک تیزی سے آرٹیفشل انٹیلی جنس پر منتقل ہورہےہیں، مصنوعی ذہانت دنیا کا مستقبل ہے، جدید طریقے اپنانے ہوں گے، کامیاب جوان پروگرام کی زبردست پذیرائی خوش آئند ہے۔

عارف علوی کا کہنا تھا کہ نوجوانوں کی تعمیروترقی کے لئے مشترکہ کوششیں ضروری ہیں، پروگرام کے پلیٹ فارم کو موثر بنا کر نوجوان نسل کی سرپرستی کریں گے۔

معاون خصوصی برائے یوتھ افیئرز عثمان ڈار نے کہا کہ سربراہان مملکت کا منصوبے میں تعاون نوجوانوں کے لئے اچھی خبر ہے، وزیراعظم کی ہدایات کی روشنی میں شفاف ترین پروگرام کی بنیاد رکھی۔

مزید پڑھیں : کامیاب جوان پروگرام کی زبردست پذیرائی

عثمان ڈار کا کہنا تھا کہ مصنوعی ذہانت پر کام بہت پہلے شروع ہو جانا چاہئے تھا ، گزشتہ حکومتوں کے باعث ملک آرٹیفشل انٹیلی جنس میں پیچھے رہ گیا، کوشش کریں گے اپنے نوجوانوں کو عالمی طرز کی تربیت فراہم کریں۔

یاد رہے 17 اکتوبر کو وزیراعظم عمران خان نے ملکی تاریخ کے سب سے بڑے فلاحی منصو بے کامیاب جوان پروگرام کا افتتاح کیا تھا ، پروگرام کے تحت نوجوانوں کو ایک لاکھ روپے تک کا بلاسود جبکہ پچاس لاکھ روپے تک کا کم شرح سود پر قرض مل سکے گا۔

وزیراعظم نے افتتاحی تقریب سے خطاب میں کہا تھا کہ ہمارا ٹارگٹ ہوگا اپنے کاروبار کے لیے 10 لاکھ نوجوانوں کو قرضے دیے جائیں، کامیاب جوان پروگرام میں سفارش نہیں چلے گی، میرٹ پر کام ہوگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں