نظام پور کی پرائمری اسکول ٹیچرکا سیکیورٹی اقدامات پرتحفظات کا اظہار -
The news is by your side.

Advertisement

نظام پور کی پرائمری اسکول ٹیچرکا سیکیورٹی اقدامات پرتحفظات کا اظہار

پشاور: خیبرپختونخواہ کی ایک پرائمری اسکول ٹیچرنے حکومت کی جانب سے اسکولوں کو جاری کردہ سیکیورٹی ہدایات پر تحفظات کا اظہارکیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گورنمنٹ گرلز پرائمری اسکول قمرمیلہ نظام پور میں تدریس کے فرائض انجام دینے والی نسیمہ شاہ نے مبینہ طورپرحکومتی طریقہ کارپرتحفظات کا اظہارکیا ہے۔

نسیمہ شاہ نے وزیراعلیٰ، آئی جی اورسیکیرٹری ایجوکیشن خیبرپختونخواہ کو مبینہ طورپرایک خط ارسال کیا ہے جن میں ان مشکلات کا ذکر کیا گیا ہے جو کہ حکومت کی جانب سے تجویزکردہ سیکیورٹی اقدامات کی تکمیل کے لئے خواتین اساتذہ کو درپیش ہیں۔

خط کے مطابق حکومت کی جانب سے خواتین اساتذہ سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ اسکول کی حفاظت کے لئے سی سی ٹی وی کیمرے، چاردیواری، لائٹنگ سسٹم، اسلحہ اورایمونیشن، مورچہ برائے سیکیورٹی گارڈ، الارم سسٹم، بائیومیٹرک سسٹم، ایس او ایس سسٹم اور سیکیورٹی گارڈز کا بندوبست کریں۔

خط میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ مندرجہ بالا سیکیورٹی ضروریات پوری نا کرنے کی صورت میں خواتین اساتذہ کےخلاف انڈر سٹیزن پروٹیکشن ایکٹ مقدمہ درج کیا جائے گا۔

خاتون استاد کا کہنا ہے کہ یہ سارے اقدامات کسی بھی خاتون ٹیچر کے لئے انجام پذیردینا ناممکن ہے لہذا حکومت یہ ذمہ داری از خود انجام دے کرانہیں گرفتاری کے خوف سے نجات دلائے

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں