The news is by your side.

Advertisement

حکومت کو مینڈیٹ ملا ہے کہ آخری دن تک کام کیا جائے: وزیر اعظم

حیدر آباد: وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ لوگ باتیں کرتے تھے ہم نےعوام دوست بجٹ میں کر دکھایا۔ تنقید ہوئی کہ حکومت کو یہ بجٹ پیش نہیں کرنا چاہیئے تھا۔ حکومت کو مینڈیٹ ملا ہے کہ آخری دن تک کام کیا جائے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے صوبہ سندھ کے شہر ٹنڈو جام میں گیس پروسیسنگ کی فیسیلٹی کا افتتاح کیا۔

افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اہم قومی منصوبوں کی تکمیل اور افتتاح کی خوشی ہے۔ او جی ڈی سی ایل نے ثابت کیا کہ اپنا کام مقرررہ وقت پر کر سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نہ صرف پرانے منصوبے مکمل کیے بلکہ نئے منصوبے بھی شروع کیے۔ ’ساڑھے 300 ٹن ایل پی جی یہاں سے نکل رہی ہے۔ ملک میں گیس کے معیار کو بہتر بنانے پر توجہ نہیں دی گئی تھی‘۔

انہوں نے کہا کہ ہم سے گیس، سڑکوں اور تعمیرات کے منصوبوں پر بحث کرلیں۔ 65 سال سے جو کام نہیں ہوئے وہ مسلم لیگ ن نے مکمل کیے۔ اداروں میں کام کرنے والے گواہ ہیں ہمیشہ کام کرنے کی بات کی۔

وزیر اعظم نے کہا کہ کراچی میں لوگ گھروں سے نکلنے سے گھبراتے تھے۔ آج دیہی اور شہری سندھ کی صورتحال آپ دیکھ لیں۔ لوگوں نے پیش گوئیاں کیں یہ حکومت نہیں چلے گی۔ حکومت نے اپنی مدت پوری کی اور منصوبے بھی مکمل کیے۔

انہوں نے کہا کہ اس مرتبہ عوام دوست بجٹ پیش کیا گیا۔ تنقید ہوئی کہ حکومت کو یہ بجٹ پیش نہیں کرنا چاہیئے تھا۔ حکومت کو مینڈیٹ ملا ہے کہ آخری دن تک کام کیا جائے۔ ’ بجٹ ہم نے پیش کیا، اگلی حکومت اس میں تبدیلی کر سکتی ہے‘۔

ان کا کہنا تھا کہ عوام پر جو ٹیکس 35 فیصد تک جاتا ہے وہ 15 فیصد پر ختم کردیا۔ ٹیکس ریفارمز پر تنقید کرنے والے پہلے اپنا ٹیکس ریکارڈ پیش کریں۔ ٹیکس ادا کرنا یا نہ کرنا آپ کی مرضی نہیں، ٹیکس ادا کرنا ہوگا۔

شاہد خاقان عباسی نے مزید کہا کہ ہمیشہ سنتے آئے تھے تھر میں بہت کوئلہ ہے۔ حکومت محنت نہ کرتی تو تھر کا کوئلہ زمین میں ہی رہتا۔ کوشش ہے کہ ریکوڈک کے وسائل بھی ملک کے کام آئیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں