The news is by your side.

Advertisement

شہزادہ ہیری والدہ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے انگولا کی مائن فیلڈ پہنچ گئے

لندن/انگولا : شہزادہ ہیری بھی اپنی والدہ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے اہلیہ میگن مرکل کے ہمراہ افریقی ملک انگولا کے بارودی سرنگوں والے علاقے میں پہنچ گئے ۔

تفصیلات کے مطابق برطانیہ کے چھوٹے شہزادے ہیری اپنی اہلیہ میگن مرک کے ہمراہ ان دنوں دورہ جنوبی افریقہ پر ہیں، جنوبی افریقہ کے دورے کے دوران شہزادہ ہیری نے انگولا کے اس علاقے کا بھی دورہ کیا جہاں سنہ 1997 میں ان کی والدہ لیڈی ڈیانا نے اسلحے پر پابندی کی مہم دوران دورہ کیا تھا۔

برطانوی میڈیا کا کہنا تھا کہ لیڈی ڈیانا نےمذکورہ جگہ کے دورے کا مقصد دنیا بھر سے بارودی سرنگوں جیسے مہلک ہتھیاروں خاتمے کا تھا تاہم وہ اپنے مقصد میں کامیاب نہیں ہوسکیں اور بارودی سرنگوں کا استعمال اب بھی جاری ہےلیکن لیڈی ڈیانا نے اس دورے شہرت بہت حاصل کی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کاکہنا تھا کہ شہزادہ ہیری کا اپنے اہل خانہ کے ہمراہ جنوبی افریقہ کا یہ پہلا دورہ ہے اس دورے کے دوران ہیری نے اپنی والدہ کی مانند انگولا میں بارودی سرنگ کوناکارہ بنایا۔

اس دوران شہزادہ ہیری نے بارودی سرنگ کو ناکارہ بنانے والی مخصوص جیکٹ بھی پہن رکھی تھی، اس دوران شہزادہ ہیری نے بارودی سرنگوں سے متاثر ہونے والے افراد سے بھی ملاقاتیں کی۔

ہمبو (انگولا کا علاقہ) کا علاقہ گزشتہ کئی برس سے بارودی سرنگوں سے بھرا ہوا ہے تاہم توقع کی جارہی ہے کہ سنہ 2025 تک انگولا میں نصب کی گئی تمام بارودی سرنگیں ناکارہ بنادی جائیں گی۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق مذکورہ علاقے کی آبادی کو کئی برسوں تک خوفناک خانہ جنگی کا سامنا کرنا پڑ اہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں