The news is by your side.

Advertisement

یوکرین کا دفاع اب قیدی کریں گے

کیف: یوکرین کا دفاع اب قیدی کریں گے، یوکرینی صدر ولودیمیر زیلنسکی کا کہنا ہے کہ یوکرین کے دفاع کے لیے لڑائی کا تجربہ رکھنے والے قیدیوں کو رہا کر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق یوکرینی صدر نے جیلوں‌ میں‌ قید لڑائی کا تجربہ رکھنے والے شہریوں‌ سے کہا سے کہ انھیں رہا کیا جا رہا ہے، وہ یوکرین کے دفاع کے لیے کلیدی کردار ادا کریں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق آج ولودیمیر زیلنسکی نے اعلان کیا ہے کہ جنگی تجربہ رکھنے والے یوکرینی قیدیوں کو جیل سے رہا کر دیا جائے گا، انھیں روس کے ساتھ جنگ کے لیے فرنٹ لائن پر معاشرے کو قرض لوٹانے کا موقع فراہم کیا جا رہا ہے۔

یوکرین کے رہنما، جنھوں نے روسی جارحیت پر اپنے ردعمل کے لیے دنیا بھر سے تعریفیں حاصل کی ہیں، نے آج صبح ایک صدارتی ویڈیو خطاب میں کہا کہ قیدی روس کے خلاف ‘نازک مقامات پر اپنے جرم کی تلافی’ کر سکیں گے۔

انھوں نے کہا ‘ہم نے ایک ایسا فیصلہ کیا ہے جو اخلاقی نقطہ نظر سے آسان نہیں ہے، لیکن جو ہمارے دفاع کے نقطہ نظر سے مفید ہے، کیوں کہ اب کلید ہی دفاع ہے۔

زیلنسکی نے یورپی یونین سے بھی اپیل کی ہے کہ وہ روسی حملے کے پیش نظر یوکرین کو خصوصی طریقہ کار کے تحت ‘فوری’ رکنیت فراہم کرے۔

واضح رہے کہ یوکرین کے رہنما ولودیمیر زیلنسکی ایک سابق کامیڈین ہیں جو 2019 میں اقتدار میں آئے تھے۔

 

Comments

یہ بھی پڑھیں