The news is by your side.

ویڈیو: ہندو پروفیسر کو بھری کلاس میں مسلم طالب علم سے معافی مانگنی پڑ گئی

کرناٹک: بھارتی ریاست بنگلورو کی ایک یونیورسٹی کے کلاس روم میں ایک ہندو پروفیسر نے مسلمان طالب علم کو دہشت گرد کہہ دیا جس پر طالب علم نے شدید ردِ عمل دیا۔

تفصیلات کے مطابق مسلم طالبعلم کو دہشتگرد کہنے پر طالب علم نے استاد کی جانب سے غیر مناسب ریمارکس ملنے پر تمیز کے دائرے میں رہتے ہوئے استاد کو اس بات کا احساس دلایا کہ وہ کیسے کسی طالب علم کو دہشت گرد کہہ سکتے ہیں۔

طالب علم نے پروفیسر سے کہا کہ یہ مذاق قابل برداشت نہیں، آپ میرے مذہب کا مذاق نہیں اڑا سکتے، بطور مسلم بھارت میں رہتے ہوئے مذہب کے خلاف بات برداشت کرنا مذاق نہیں۔

طالب علم نے اپنے پروفیسر سے سوال کیا کہ کیا وہ اپنے بچے کو سوال کرنے پر دہشت گرد کہہ کر پکاریں گے، جس کے بعد استاد نے بھری کلاس میں مسلمان طالب علم سے معافی مانگ لی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں