The news is by your side.

Advertisement

خیبرپختونخوا: ذخیرہ اندوزی کی روک تھام کے لیے مجوزہ آرڈیننس تیار

پشاور: خیبرپختونخوا حکومت نے ذخیرہ اندوزی کی روک تھام کے لیے مجوزہ آرڈیننس تیار کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق کے پی کے حکومت نے ذخیرہ اندوزوں کے خلاف حکمت عملی سخت کرلی۔ تیار کیے گئے مجوزہ آرڈیننس کے تحت ذخیرہ اندوزی کرنے والوں کو 3سال قید کی سزا ہوگی۔

آرڈیننس کے نکات میں کہا گیا ہے کہ ذخیرہ اندوز پر برآمدشدہ مال کا 50 فیصد جرمانہ ہوگا، اسپیشل مجسٹریٹ ذخیرہ اندوزی کے کیسز کی سماعت کریں گے، مجسٹریٹ 1ماہ کے اندر کیسز کا فیصلہ کرنے کا پابند ہوگا۔

صدر مملکت نے ذخیرہ اندوزی سےمتعلق آرڈیننس پر دستخط کر دیے

مجوزہ نکات کے تحت 32اشیائے خوردونوش پر آرڈیننس لاگو ہوگا۔ خیال رہے کہ 17 اپریل کو اسلام آباد میں ذخیرہ اندوزی سے متعلق خصوصی آرڈیننسس نافذ ہوا، صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کی جانب سے دستخط کرنے کے بعد ذخیرہ اندوزی کےخلاف آرڈیننس فوری طور پر نافذ العمل ہوگیا۔

اسلام میں نافذ العمل آرڈیننس کے مطابق ذخیرہ اندوزی میں ملوث افراد کو 3 سال کی سزا دی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں