The news is by your side.

Advertisement

گجرپورہ زیادتی کیس : پراسیکیوشن کمیٹی کے ایک ممبر کو تبدیل کردیا گیا

لاہور : گجرپورہ زیادتی کیس کیلیے قائم پراسیکیوشن کمیٹی کے ایک ممبر کو تبدیل کردیا گیا ، ڈسٹرکٹ پراسیکیوٹررائےمشتاق نےکیس پر 4رکنی کمیٹی تشکیل دے رکھی تھی۔

تفصیلات کے مطابق گجر پورہ اجتماعی زیادتی کیس کی پیروی کرنے والی پراسیکیوشن ٹیم کے ایک رکن کو تبدیل کردیا گیا، ڈسٹرکٹ پبلک پراسیکیوٹر راٸے مشتاق نے موٹروے پر خاتون سے اجتماعی زیادتی کے کیس میں چار رکنی پراسیکیوشن کمیٹی تشکیل دی تھی، جس میں پبلک پراسیکیوٹر شہباز خان، حبیب الرحمن ، ساجد سعید اور محسن حسن بھٹی شامل تھے۔

تاہم رائے مشتاق نے محسن حسن بھٹی کو کمیٹی سے ہٹا کر ان کی جگہ پراسیکیوٹر محمد شبیر کو کمیٹی میں شامل کر دیا ہے۔

ملزمان کے خلاف تھانہ گجرپورہ میں زیادتی اور ڈکیتی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج ہے، پراسیکیوشن ٹیم مقدمہ کی تمام تفصیل ڈسٹرکٹ پراسیکیوٹر آفس کو فراہم کرے گی اور پولیس کے ساتھ مل کر ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچاٸے گی ۔

ایف آئی آر کے مطابق ڈاکووں نے موٹروے پر بچوں کے سامنے ماں کو اجتماعی زیادتی کانشانہ بنایا، خاتون اپنے بچوں کے ہمراہ لاہور سے گوجرانوالہ جا رہی تھی۔ خاتون کے مطابق گجرپورہ کے قریب گاڑی میں پٹرول ختم ہوا تو گاڑی سڑک کنارے کھڑی کی۔ اسی دوران ڈاکو آ گئے ، جو لوٹ مار کے بعد زبردستی جنگل میں لے گئے اور بچوں کے سامنے زیادتی کرتے رہے۔

ایف آئی آر میں کہا گیا ملزمان نے جاتے ہوئے ایک لاکھ روپے نقدی، سونے کے زیورات اور اے ٹی ایم کارڈز بھی چھین لیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں