The news is by your side.

Advertisement

سندھ ہاؤس میں موجود حکومتی ارکان کے خلاف احتجاج کا سلسلہ شروع

اسلام آباد: وفاقی دارالحکومت میں واقع سندھ ہاؤس سے برآمد ہونے والے منحرف حکومتی ارکان کے خلاف ان کے شہروں میں احتجاج کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق فیصل آباد میں راجہ ریاض کے خلاف پی ٹی آئی کے زیر اہتمام احتجاجی مظاہرہ کیا گیا، احتجاج کے دوران ضلع کونسل چوک کو بلاک کیا گیا، اور کارکنوں نے شدید نعرے بازی کی، احتجاج میں چیئرمین قائمہ کمیٹی خزانہ فیض کموکا، اور صوبائی وزیر خیال کاسترو بھی شامل تھے۔

ضلع کونسل چوک میں پی ٹی آئی احتجاج میں لوٹے بھی لہرائے گئے، کارکنوں نے راجہ ریاض ضمیر فروش کے بینرز اٹھا رکھے تھے، احتجاج کے دوران نواب شیر وزیر کے خلاف بھی شدید نعرے بازی کی گئی۔

سندھ ہاؤس پر دھاوا بولنے والے پی ٹی آئی ارکان اسمبلی اور کارکنان گرفتار

پشاور میں پی ٹی آئی کارکنوں نے ایم این اے نور عالم کے خلاف احتجاج کیا، کارکنوں کا کہنا تھا ایم این اے ضمیر فروش ہے، کارکنوں نے نور عالم کا تصویر والا پوسٹر بھی پھاڑ دیا، اور پشاور پریس کلب کے باہر نور عالم کے پوسٹر پر انڈے پھینکے گئے۔

پی ٹی آئی کارکن گیٹ توڑ کر سندھ ہاؤس میں داخل

ادھر سندھ کے شہر حیدر آباد میں بھی پی ٹی آئی منحرف اراکین کے خلاف پریس کلب پر احتجاج کیا گیا ہے، پی ٹی آئی کارکنوں نے ایم این اے نزہت پٹھان کے خلاف نعرے بازی کی۔

پی ٹی آئی منحرف رکن راجہ ریاض کو حلقے کے کارکن کی ٹیلی فون کال بھی سامنے آگئی ہے، پی ٹی آئی کارکن نے فون پر کہا سندھ ہاؤس میں آپ کو دیکھا تو پریشانی ہوئی، ہم نے آپ کو اس لیے ووٹ نہیں دیا کہ آپ زرداری کو بیچ دو، بہتر ہے عدم اعتماد سے پہلے استعفیٰ دے دیں، آپ کے جانے پر لوگ ہمیں تھو تھو کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ اسلام آباد میں سندھ ہاؤس پر بھی تحریک انصاف کی طلبہ تنظیم انصاف اسٹوڈنٹ فیڈریشن کے کارکنوں نے دھاوا بولا، اور دروازہ توڑتے ہوئے اندر گھس گئے، مظاہرین نے لوٹے بھی اٹھا رکھے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں