The news is by your side.

Advertisement

پی ایس ایل تھری : کراچی کنگزنے لاہورقلندر کو 27رنز سے شکست دے دی

دبئی : پاکستان سپرلیگ سیزن تھری کے اہم میچ میں کراچی کنگز نے لاہور قلندر کو 27 رنز سے شکست دے دی، کراچی کنگز کے ہدف 160 رنز کے تعاقب میں لاہور قلندرز 18.3 اوورز میں 132 رنز بنا سکی۔ شاہد آفریدی مین آف دی میچ کے حقدار قرار پائے۔ 

تفصیلات کے مطابق دبئی کے انٹر نیشنل اسٹیڈیم میں پی ایس ایل تھری کے آٹھویں میچ میں کراچی کنگزنے لاہور قلندر کو باآسانی 27رنز سے ہرادیا، کراچی کنگز نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے سات وکٹوں کے نقصان پر 159رنز اسکور کیے تھے۔

جواب میں لاہور قلندرکی پوری ٹیم 18.3 اوورز میں 132رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی، کراچی کنگز کے شاہد آفریدی نے چار اوورز میں 19 رنز اور عثمان خان نے چار اوورز میں 26رنز دے کر تین، تین وکٹیں حاصل کیں۔

کراچی کنگز کی جانب سے بوپارا نے شاندارنصف سنچری اسکور کی، انہوں نے اننگز کی آخری گیند پرچھکا لگاکر50رنزمکمل کیے, جوزف ڈینلے اورکولن انگرام نے28،28رنز بنائے، لاہور قلندر کی جانب سے سہیل خان، یاسرشاہ اورسنیل نرائن نے 2،2وکٹیں حاصل کیں

کراچی کنگز6پوائنٹس کےساتھ فہرست میں ٹاپ پرآ گئی، پی ایس ایل میں لاہور قلندرز اور کراچی کنگز نے اب تک تین تین میچز کھیلیں ہیں۔ کراچی کنگز نے اپنے تینوں میچز میں کامیابی حاصل کی لیکن لاہور قلندرز کو تینوں میچز میں شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

لاہور قلندر کی اننگز

انیسواں اوور : 

اس اوور کی تیسری بال پر لاہور قلندر کے آخری کھلاڑی مستفیض الرحمان کوئی رن بنائے بغیر ٹیمل ملز کی بال پر ان ہی کے ہاتھوں کیچ دے کر اپنے وکٹ گنوا بیٹھے، اس طرح کراچی کنگز نے لاہور قلندرز کو 27 رنز سے ہرا دیا۔

اٹھارہواں اوور : 

اوور کی چوتھی بال پر شاہین آفریدی صرف ایک رن بنا سکے ، وہ عثمان خان کی گیند پر ان ہی کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے، نئے آنے والے کھلاڑی مستفیض الرحمان ہیں، لاہور ٹیم کا اسکور اس اوور کے اختتام پر چھ رنز کے اضافے کے ساتھ 132 رنز ہے اور اس کی نو وکٹیں گر چکی ہیں۔

سترہواں اوور : 

اوور کی پانچویں بال پر یاسر شاہ 6 رنز بنا کر ٹیمل ملز کی گیند پر بولڈ ہوگئے، ٹیم لاہور کا اسکور آٹھ وکٹوں کے نقصان پر 126رنز ہے۔

سولہواں اوور : 

میچ کے سولہویں اوورکی تیسری بال پر دنیش رام دین گیارہ رنز بنا کر محمد عرفان کی گیند پر جوزف ڈینلے کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے، اس اوور  میں چھ رنز کے اضافے کے ساتھ ٹیم قلندر کا سکور 122 ہوگیا، اور اس کے سات کھلاڑی آؤٹ ہوکر پویلین لوٹ چکے ہیں۔

پندرہواں اوور : 

اس اوور کی چوتھی بال پر آغا سلمان 15 رنز بنا کر عثمان خان کی گیند پر ٹیمل ملز کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے۔ ٹیم لاہور کا اسکور 15ویں اور کے اختتام پر 116 رنز چھ کھلاڑی آؤٹ ہے۔

چودہواں اوور : 

لاہور قلندر نے اوور کے اختتتام تک اسکور میں سات رنز کا اضافہ کیا، جس کے سبب مجموعی اسکورپانچ وکٹوں پر 113 رنزتک جا پہنچا،

تیرہواں اوور : 

تیرہ اوورز میں لاہور قلندر کے کھلاڑی صرف چار رنز کا اضافہ کرسکے، ٹیم لاہور کا اسکور 106رنز ہوگیا،

بارہواں اوور : 

کھیل کے بارہویں اوور کے اختتام پر قلندرز کا اسکور پانچ وکٹوں کے نقصان پر 102رنز ہوگیا،

گیارہواں اوور : 

اوور کی پہلی بال پر سہیل اختر نو رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے ، وہ شاہد آفریدی کی گیند پر جوزف ڈینلے کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے، ٹیم کا مجموعی اسکور 94 رنز 5 کھلاڑی آؤٹ ہے۔ نئے آنے والے کھلاڑی آغا سلمان ہیں۔

دسواں اوور : 

کھیل کے دسویں اوور میں صرف دو رنز کا اضافہ ہوسکا، ٹیم لاہور کا اسکور 91 رنز ہے اور اس کے چار کھلاڑی آؤٹ ہوئے۔

نواں اوور : 

کھیل کے اس اوور کی دوسری بال پر عمر اکمل شاہد آفریدی کی بال پر اسٹمپ آؤٹ ہوگئے، انہوں نے چھ رنز بنائے ، لاہور قلندر کا اسکور چار وکٹوں کے نقصان پر 89 رنز ہے، نئے آنے والے کھلاڑی سہیل اختر ہیں۔

آٹھواں اوور : 

اوور کی پہلی بال پر اوپنر برینڈن میکلم عماد وسیم کی بال پر ایل بی ڈبلیو ہوگئے، نئے آنے والے کھلاڑی دنیش رام دین  ہیں۔ قلندر کا مجموعی اسکور 80رنز تین کھلاڑی آؤٹ ہے۔

ساتواں اوور : 

ساتویں اوور کی چوتھی بال پر فخر زمان 19رنز بنا کر شاہد آفریدی کی گیند پر روی بوپارہ کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے۔ نئے آنے والے کھلاڑی عمر اکمل ہیں۔لاہور کا اسکور دو وکٹوں کے نقصان پر 72رنز ہے۔

چھٹا اوور : 

چھٹے اوور کے اختتام پر قلندرز کے اسکور میں 16رنز کا اضافہ  ہوا جس میں میکلم کئےئ دو چوکے اور ایک چھکا بھی شامل ہے۔ ٹیم لاہور کا مجموعی اسکور ایک وکٹ کے نقصان پر 68رنز ہے۔

پانچواں اوور : 

میچ کے اس اوور میں برینڈن میکلم اور فخر زمان کے دو چوکوں کی مدد سے قلندر کا اسکور 12 رنز کے اضافے ساتھ ایک وکٹ کے نقصان پر 52رنز ہوگیا۔

چوتھا اوور : 

لاہور قلندر نے چوتھے اوور کے اختتام تک8رنز کے اضافے کے ساتھ  40 رنز اسکور کرلیے، اور اس کا ایک کھلاڑی آؤٹ ہوا ہے۔

تیسرا اوور: 

کھیل کے تیسرے اوور میں لاہور قلندر کا اسکور نو رنز کے اضافے کے ساتھ ایک وکٹ کے نقصان پر 32 ہوگیا۔اس وقت کریز پر برینڈن میکلم 23رنز اور فخر زمان 12 رنز کے ساتھ موجود ہیں۔

دوسرا اوور: 

دوسرے اوور میں لاہور قلندر کا اسکور 23رنز ہے اور اس کا ایک کھلاڑی آؤٹ ہوا ہے۔ جس میں برینڈن میکلم کا ایک چھکا بھی شامل ہے۔

پہلا اوور: 

پہلے اوور کی دوسری بال پر لاہور قلندر کے اوپنر کوئی رن بنائے بغیر عثمان خان کی بال پر کیچ آؤٹ ہوگئے، قلندرز کا اسکور ایک وکٹ کے نقصان پر 8رنز ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کراچی کنگز کی اننگز

بیسواں اوور : 

کھیل کے آخری اوور میں کراچی کنگز کے روی بوپارہ اور محمد عرفان کے چھکوں کی بدولت کراچی کنگز کا اسکور 18 رنز کے اضافے کے ساتھ سات وکٹوں کے نقصان پر 159 ہوگیا

انیسواں اوور : 

اس اوور کے اختتتام پر کراچی کنگز کا مجموعی اسکور 141 رنز ہے اور اس کے سات کھلاڑی آؤٹ ہوئے،اسکور میں روی بوپارہ کا ایک چھکا بھی شامل ہے۔

اٹھارہواں اوور : 

کراچی کنگز نے اٹھارہ اوور میں 128رنز بنالیے اور اس کے سات کھلاڑی آؤٹ ہوئے۔

سترہواں اوور: 

اس اوور کی دوسری دوسری بال پر کراچی کنگز کو ایک اور نقصان اٹھانا پڑا، کپتان عماد وسیم 15رنز بنا کر سہیل خان کی بال پر آؤٹ ہوگئے۔ نئے آنے والے کھلاڑی شاہد آفریدی ہیں، شاہد خان آفریدی نے آتے ہی ایک چھلا لگایا اور اگلی ہی گیند پر کیچ آؤٹ ہوکر پویلین چلے گئ، ٹیم کراچی اسکور اس اوور کے اختتام پر 18رنز کے اضافے کے ساتھ سات وکٹوں کے نقصان پر 122 رنز ہوگیا۔

سولہواں اوور : 

کراچی کنگز نے اس اوور میں نو رنز کے اضافے کے ساتھ 104 رنز بنا لیے، اور کی پانچ وکٹیں گر چکی ہیں،

پندرہواں اوور : 

کھیل کے پندرہویں اوور میں ٹیم کراچی کا اسکور 5رنز کے اضافے کے ساتھ 95رنز ہوگیا، اور اس کے پانچ کھلاڑی آؤٹ ہیں۔

چودہواں اوور : 

اس اوور کی تیسری بال پر نئے آنے والے کراچی کنگز کے وکٹ کیپر محمد رضوان صرف ایک رن بنا سکے، ان کا کیچ سنیل نارائن کی بال پر برینڈن میکلم نے پکڑا۔ اس اوور کےاختتام پر ٹیم کراچی کا اسکور 90رنز پانچ کھلاڑی آؤٹ ہے، نئے آنے والے کھلاڑی عماد وسیم ہیں۔

تیرہواں اوور : 

اوور کی چوتھی بال پر کولن انگرام 28 رنا بنا کر ایک زور دار شاٹ کھیلتے ہوئے باؤنڈری پر کیچ آؤٹ ہوگئے، یاسر شاہ کی بال پر عمر اکمل نے ان کا کیچ خوبصورت انداز میں پکڑا۔ ٹیم کراچی کا اسکور 88رنزہے، اور اس کے چار کھلاڑی پویلین لوٹ گئے۔

کراچی کنگز نے میچ کے بارہویں اوور میں 8 رنز کے اضافے کے ساتھ 81 رنز بنا لیے اور اس کے تین کھلاڑی آؤٹ ہوئے، جس میں کولن انگرام کا ایک چھکا بھی شامل ہے۔

گیارہواں اوور: 

کھیل کے گیارہویں اوور میں ٹیم کراچی کا مجموعی اسکور3وکٹوں کے نقصان پر 73 رنز ہے۔ اس وقت روی بوپارا17 اور کولن انگرام 19رنز کے ساتھ کریز پر موجود ہیں۔

دسواں اوور : 

کراچی کنگز نے دسویں اوور کے اختتام پر 68رنز بنا لیے اور کے تین کھلاڑی آؤٹ ہیں۔

نواں اوور : 

کھیل کےنویں اوور میں 87رنز کے اضافے کے بعد ٹیم کا اسکور 60رنز ہوگیا۔

آٹھواں اوور : 

کراچی کنگز میچ کے آٹھویں اوور مٰیں صرف پانچ رنز کا اضافہ کرسکی مجموعی اسکورتین وکٹوں کے نقصان پر 52 ہوگیا،

ساتواں اوور : 

کھیل کے ساتویں اوور میں ٹیم کراچی کے اسکور میں 8رنز کا اضافہ ہوا، تین وکٹوں کے نقصان پر کراچی کنگز کا اسکور 47رنز ہے۔

چھٹا اوور : 

چھٹے اوور کی تیسری بال پر خرم منظور 8رنز بنا کر سنیل نارائن کی بال پر وکٹ کیپر عمر اکمل کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے، نئے آنے والے کھلاڑی روی بوپارہ ہیں۔ اس وقت کراچی کنگز کا مجموعی اسکور 39رنز ہے اور اس کے تین کھلاڑی آؤٹ ہوکر پویلین جا چکے ہیں۔

پانچواں اوور : 

اس اوور کی پہلی بال پر ہی بابر اعظم کوئی رن بنائے بغیر ہی پویلین لوٹ گئے، انہیں مستفیض الرحمان نے ایل بی ڈبلیو کیا۔ ٹیم کے اسکور میں کوئی اضافہ نہ ہوسکا۔ نئے آنے والے کھلاڑی کولن اینگرم ہیں۔

چوتھا اوور : 

چوتھے اوور میں کراچی کنگز کو پہلا نقصان اٹھانا پڑا، جوزف ڈینلے 28 رنز بنا کر یاسر شاہ کی بال پر سنیل نارائن کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے، نئے آنے والے کھلاڑی بابر اعظم ہیں اور ٹیم کا اسکور ایک وکٹ کے نقصان پر 36رنز ہے۔

تیسرا اوور : 

تیسرے اوور کے اختتام پر کراچی کا اسکوربغیر کسی نقصان کے 28رنز تھا

دوسرا اوور: 

دوسرے اوور میں بھی ڈینلے نے شاندار کارکردگی دکھاتے ہوئے شاہین ٖآفریدی کی بال پر 104 میٹر کا لمبا چھکا لگایا، ٹیم کراچی کا اسکور 22رنز ہے اور اس کا کوئی کھلاڑی آؤٹ نہیں ہوا۔

پہلا اوور : 

کراچی کنگز کے اوپنرز خرم منظور اور جوزف ڈینلے نے کھیل کا آغاز کیا، خرم منظور پہلی گیند پر بیٹ ہوئے تاہم دوسری بال پر ہی انہوں نے سہیل خان کی بال پر سنبھل کر زرو دار شاٹ کھیلتے ہوئے گیند باؤنڈری کے پار کردی، اس کے بعد ڈینلے نے بھی ایک چوکا لگا دیا، پہلے اوور کے اختتام پر کراچی کنگز کا اسکور نو رنزہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کراچی کنگز

عماد وسیم کراچی کنگز کے کپتان ہیں جبکہ دیگر کھلاڑیوں میں شاہد آفریدی، محمد عامر، عماد وسیم، بابر اعظم، محمد رضوان، روی بوپارا، عثمان شنواری، اسامہ میر، خرم منظور، کولن انگرم، مچل جانسن، لیوک رائٹ، ڈیوڈ ویسی، تابش خان، محمد عرفان، حسن محسن، کولن منرو، اوئن مارگن اور سیف اللہ بنگش شامل ہیں۔

لاہور قلندرز

لاہور قلندر کی قیادت برینڈن مک کلم کر رہے ہیں ، ان کے علاوہ ٹیم میں عمراکمل اورفخرزمان، نیوزی لینڈ کے اینٹن ڈیوسچ ، بولر سہیل خان، یاسرشاہ ، شاہین آفریدی ، رضا حسن ، سنیل نرائن ، بلاول بھٹی ، غلام مدثر ، بلال آصف ، آغا سلمان ، کیمرون ڈلپورٹ شامل ہیں۔

 

 


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں