پی ایس ایل ڈرافٹ: میڈیا نے پی ایس ایل کووہ بنا دیا، جو کوئی سوچ بھی نہیں سکتا تھا: سلمان اقبال -
The news is by your side.

Advertisement

پی ایس ایل ڈرافٹ: میڈیا نے پی ایس ایل کووہ بنا دیا، جو کوئی سوچ بھی نہیں سکتا تھا: سلمان اقبال

ڈرافٹنگ میں بہترین کھلاڑیوں کا انتخاب کریں گے: صدر وسیم اکرم

اسلام آباد: پی ایس ایل سیزن فور کی ڈرافٹنگ کی تقریب کا آغاز ہوگیا ہے ، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کراچی کنگز کے مالک مسٹر سلمان اقبال کا کہنا ہے کہ پی ایس ایل کی کامیابی میں میڈیا نے انتہائی اہم کردار ادا کیا ہے، صدر وسیم اکرم کا کہنا تھا کہ ڈرافٹنگ میں بہترین کھلاڑیوں کا انتخاب کریں گے۔

پی ایس ایل ڈرافٹنگ کی تقریب آج وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں منعقد ہورہی ہے ، کراچی کنگز کی جانب سے ٹیم کے مالک مسٹرسلمان اقبال اور صدرو سیم اکرم نے میڈ یا سے خصوصی گفتگو کی ۔

میڈیا کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئےکراچی کنگز کے مالک مسٹر سلمان اقبال کا کہنا تھا کہ کراچی کنگز پی ایس ایل کی سب سے پسندیدہ ٹیم ہے ، کوشش کریں اس سال بھی پی ایس ایل کی اچھی ٹیم بنائیں۔

انہوں نے اعلان کیا کہ اس سال بھی کراچی کنگزکےکپتان عمادوسیم ہی ہوں گے۔ہماری ٹیم بہترین کھلاڑیوں پرمشتمل ہے اور ہمارےپاس3بلےبازہیں جبکہ کپتان عمادوسیم آل راؤنڈرہیں۔گزشتہ سال بھی ہماری ٹیم مضبوط تھی4میچ جیتےاور2میچ ہارے۔

گزشتہ سال ہمارےکپتان عمادوسیم انجرڈہوگئے تھے ،شاہدآفریدی کپتان بنے تاہم وہ بھی انجری کا شکار ہوئے۔

مسٹر سلمان اقبال کا کہنا تھا کہ میڈیانےپی ایس ایل کووہ بنادیاہےجوکوئی سوچ بھی نہیں سکتاتھا،پی ایس ایل کے8میچزکراچی اورلاہورمیں ہوں گے۔

پریس کانفرنس سے قبل مسٹر سلمان اقبال نے کراچی کنگز کے مداحوں کے لیے سوشل میڈیا پر ویڈیو پیغام بھی جاری کیا تھا۔

دریں اثنا کراچی کنگز کے حال ہی میں منتخب کیے جانے والے صدر اور سابق آل راؤنڈر وسیم اکرم کا کہنا تھا کہ کوشش ہوگی بہترین ٹیم بنائیں،ڈرافٹ میں بہترین کھلاڑیوں کومنتخب کریں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ کوئی بھی جیت سکتا ہے اور ہار سکتا ہے ، ہماری کوشش ہوگی کہ آخری گیند تک لڑ کر عمدہ کھیل پیش کریں۔ وسیم اکرم کا مزید کہنا تھا کہ پی ایس ایل ایک کامیاب ایونٹ بن گیا ہے۔پی ایس ایل میں غیرملکی کھیلناچاہتےہیں اور اس کی تعریف بھی کرتےہیں۔

کراچی کنگز کے صدر وسیم اکرم نے بھی پریس کانفرنس سے قبل ٹیم کے مداحوں ے لیے ویڈیو پیغام جاری کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں