The news is by your side.

Advertisement

پی ایس ایل فکسنگ: ناصرجمشید نے پی سی بی کے الزامات مسترد کردیئے

لاہور : سابق قومی کرکٹر ناصر جمشید نے پی ایس ایل فکسنگ کے حوالے سے لگائے جانے والے الزامات مسترد کردیئے، پی سی بی نے کیس اینٹی کرپشن ٹریبونل کے سپرد کردیا۔

تفصیلات کے مطابق پی ایس ایل فکسنگ اسکینڈل میں ایک سال کی پابندی کا سامنا کرنے والے کرکٹر ناصر جمشید اپنے اوپر لگنے والے تمام الزامات مسترد کرتے ہوئے پی سی بی سے قانونی جنگ کے لئے تیار ہوگئے، پی سی بی نے کیس اینٹی کرپشن ٹریبونل کے سپرد کردیا ہے۔

پی سی بی نے ناصر پر اینٹی کرپشن کوڈ کی پانچ شقوں کی خلاف ورزی کا الزام عائد کیا تھا۔ اسپاٹ فکسنگ کیس میں ناصر جمشید پی سی بی کے سامنے پیش نہیں ہوئے اور نہ ہی کوئی تعاون کیا۔

یاد رہے کہ اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل میں ناصر جمشید پر پابندی فروری میں ختم ہوچکی ہے، اب ان کے مستقبل کا فیصلہ پی سی بی کا تین رکنی اینٹی کرپشن ٹریبونل کرے گا۔

واضح رہے کہ پی سی بی اینٹی کرپشن ٹربیونل نے گزشتہ سال دسمبر میں اسپاٹ فکسنگ کیس میں ناصرجمشید پر ایک سال کی پابندی لگائی تھی،۔

مزید پڑھیں: اسپاٹ فکسنگ کیس، کرکٹرناصرجمشید پرایک سال کی پابندی عائد

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اسپاٹ فکسنگ کیس میں تعاون نہ کرنے پر مرکزی ملزم کے طور پر پیش کئے جانے والے ناصر جمشید پر ایک سال کی پابندی عائد کی تھی۔

مزید پڑھیں: پی سی بی نے اوپنرناصرجمشید کو بھی معطل کردیا

اس حوالے سے پی سی بی کے وکیل تفضل رضوی کا کہنا تھا کہ ناصر جمشید پر اسپاٹ فکسنگ کے چارجز نہیں لگائے گئے ہیں بلکہ کیس میں تعاون نہ کرنے پر ان پر پابندی عائد کی گئی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیاپر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں