The news is by your side.

Advertisement

پاک فوج کو بدنام کرنا نوازشریف کی عادت بن گئی ہے: عمران خان

نوازشریف جب بھی اقتدارسے باہرہوتے ہیں، فوج کے خلاف باتیں کرنے لگتے ہیں

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ لگتا ہے، پاک فوج کو بدنام کرنا نوازشریف کی عادت بن گئی ہے.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر کیا، انھوں نے کہا کہ نوازشریف جب بھی اقتدارسے باہرہوتے ہیں، فوج کے خلاف باتیں کرنے لگتے ہیں.

تفصیلات کے مطابق ٹویٹر پر عمران خان نے نوازشریف نے 1994 میں امریکی اخبار کو دیے ہوئے ایک انٹرویو کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ نواز شریف نے فوج کا بدنام کرنا وتیرہ بنا لیا، ماضی میں‌ بھی انھوں نے ایسا ہی کیا تھا.

اپنے ٹویٹر میں‌ انھوں نے دی واشنگٹن پوسٹ کو دیے ہوئے نواز شریف کے متنازع انٹرویو کا لنک شیئر کیا. اس انٹرویو میں نوازشریف نے 1994 میں پاک فوج کے افسران پرہیروئن اسمگلنگ کی منصوبہ بندی کا سنگین الزام لگایا.

پی ٹی آئی چیئرمین نے اس انٹرویو کو موجودہ صورت حال اور نواز شریف کے بیانات سے جوڑتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن کے قائد نے فوج کو بدنام کرنا اپنی عادت بنا لی ہے.

یاد رہے کہ گذشتہ دونوں میاں نواز شریف ایک انگریزی روزنامے کو ایک متنازع انٹرویو دیا تھا، جس میں ان کے ممبئی حملوں سے متعلق بیانات نے کھلبلی مچا دی تھی. ہندوستان نے اس انٹرویو کو اعترافی بیان قرار دیا تھا۔

نواز شریف کے اس بیان کے بعد سیاست دانوں، عوام اور اداروں‌ کی جانب سے شدید ردعمل آیا اور ان سے معافی کا مطالبہ کیا گیا۔


ن لیگ مسائل میں‌ گھرا ہوا پاکستان چھوڑ کر جا رہی ہے: عمران خان


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں