پاکستان تحریک انصاف کا قومی اسمبلی میں 180ممبران کی حمایت کا دعویٰ
The news is by your side.

Advertisement

پاکستان تحریک انصاف کا قومی اسمبلی میں 180ممبران کی حمایت کا دعویٰ

اسلام آباد : پاکستان تحریک انصاف کی مرکز میں پوزیشن مضبوط ہوگئی اور قومی اسمبلی میں ایک سو اسی ممبران کی حمایت کا دعویٰ کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی کے رہنما فوادچوہدری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ پی ٹی آئی اوراتحادیوں کا قومی اسمبلی میں نمبر180 کراس کرگیا، حتمی اکثریت کےلیے172ارکان کی حمایت درکار تھی، تحریک انصاف کووفاق میں بڑی کامیابی بی این پی(مینگل) کی حمایت کے بعد ملی۔

گزشتہ روز کوئٹہ میں پی ٹی آئی اور بلوچستان نیشنل پارٹی میں چھ نکاتی معاہدے پر اتفاق ہوا تھا، تحریک انصاف کو مرکز میں ق لیگ،ایم کیو ایم پاکستان ، جی ڈی اے، بی اے پی ،جمہوری وطن پارٹی، عوامی مسلم لیگ سمیت آٓزار اراکین کی بھرپور حمایت حاصل ہوگئی ہیں۔


مزید پڑھیں : مذاکرات کام یاب: بلوچستان نیشنل پارٹی وزارتِ عظمیٰ کے لیے عمران خان کی حمایت کرے گی


اختر مینگل کا کہنا تھا کہ عمران خان کے ساتھ دو دن سے رابطے میں ہوں، اب بلوچستان کے لوگوں کے زخموں کو بھرنے کا وقت آ گیا، پی ٹی آئی بلوچستان کا احساسِ محرومی ختم کر سکتی ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا تھا کہ دیرینہ مسائل حل کرنے کیلئے نیک نیتی سے معاہدہ کیا ہے، پی ٹی آئی وفاق کی علامت ہے، وفاقی سوچ لے کر کوئٹہ آئے، سی پیک قومی منصوبہ ہے، بلوچستان کی اہمیت تبدیل ہو جائے گی، تمام فیصلے مشترکہ اتفاق رائے سے ہوں گے۔

واضح رہے کہ وزارت عظمی کے لئے 172 اراکین کی حمایت درکار ہوگی، پہلے مرحلے میں مطلوبہ اکثیرت حاصل نہ ہونے پر قائد ایوان کا دوبارہ الیکشن ہوگا، ایوان میں موجود اکثریتی ارکان کی حمایت حاصل کرنے پرقائد ایوان منتخب ہو جائے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں