کراچی میں بلدیاتی انتخابات: جماعت اسلامی اورتحریک انصاف کا عدم اطمینان کا اظہار -
The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں بلدیاتی انتخابات: جماعت اسلامی اورتحریک انصاف کا عدم اطمینان کا اظہار

کراچی: تحریک انصاف اور جماعت اسلامی نے کراچی میں ہونے والے انتخابات میں رینجرز اورالیکشن کمیشن کے کردارپرعدم اطمینان کا اظہار کردیا ہے۔

جماعت اسلامی کے امیرحافظ نعیم الرحمن نے اے آروائی نیوزسے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ کراچی کا بلدیاتی الیکشن ایم کیو ایم کوپلیٹ میں رکھ کردیا جارہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جعلی مینڈیٹ کی بنیادپرایم کیوایم کوکراچی پرمسلط کیا جارہا ہے، حکومتی مشینری بھی دھاندلی کے لئے استعمال ہورہی ہے۔

حافظ نعیم نے الیکشن کمیشن سندھ کے سربراہ کواس سارے معاملے کا ذمہ دارقراردیا ہے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ جن پولنگ اسٹیشنوں پررینجرزموجود ہے وہاں قبضہ نہیں ہوا جبکہ فیڈرل بی ایریا کے پولنگ اسٹیشن پرایم کیوایم قابض ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ متعدد بار الیکشن کمیشن کوتحریری طور پر مطلع کیا کہ کراچی میں الیکشن کے دوران فوج تعینات کی جائےتاہم ہمارا یہ مطالبہ منظورنہیں کیا گیا۔


رینجرزکے کردار سے مطمئن نہیں، عمران اسماعیل


تحریک انصاف کے رہنماء عمران اسماعیل نے بلدیاتی انتخابات میں رینجرز کے کردار پرعدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔

اے آروائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات میں رینجرزکے کردارسے مطمئن نہیں ہیں، رینجرز نے ویسے انتظامات نہیں کئے جیسے عید الاضحیٰ پر کھالوں کی چھینا جھپٹی روکنے کے لئے کئے گئے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارا مطالبہ تھا کہ تمام پولنگ اسٹیشن کے اندراورباہر رینجرز تعینات کی جائے جو کہ نہیں ہوا ہے۔

عمران اسماعیل کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن 2013 کی طرح شفاف انتخابات کرانے میں ناکام رہا ہے

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں