The news is by your side.

Advertisement

پی ٹی آئی پنجاب میں حکومت بنانے کی پوزیشن میں آگئی، وزیراعلیٰ کون ہوگا؟

اسلام آباد : آزاد امیدواروں اور مسلم لیگ (ق) کی حمایت کے بعد پاکستان تحریک انصاف پنجاب میں حکومت سازی کی پوزیشن میں آگئی، پنجاب میں حکومت سازی کیلئے میاں اسلم کے بعد شاہ محمود قریشی اور یاسمین راشد کا نام بھی پنجاب کی وزارت اعلیٰ کے امیداواروں میں شامل ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن 2018کے بعد بنی گالہ سیاسی سرگرمیوں کا اہم مرکز بن گیا، پنجاب میں وزارت اعلیٰ کا اونٹ کس کروٹ بیٹھے گا، حکومت سازی کے لیے سوچ بچار کیلئے بنی گالہ میں مشاورت جاری ہے۔

میاں اسلم کے بعد شاہ محمود قریشی کا نام بھی سامنے آیا ہے، اس کے علاوہ یاسمین راشد بھی فیورٹ قرار پائی ہیں، پی ٹی آئی کے وائس چیئرمین نے عبوری وزیراعلیٰ پنجاب لانے کی بھی تجویز پیش کی ہے۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے لیے عاطف خان کا نام فائنل کرلیا گیا، چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے پرویز خٹک کو اپنی کابینہ میں شامل کرنے کے لئے راضی کر لیا۔

جس کے بعد یہ امکان ظاہر کیا جا رہا ہے کہ پرویز خٹک کو وفاقی وزیر داخلہ بنایا جائے گا، پرویز خٹک کے بعد وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کیلئے عاطف خان مضبوط امیدوار ہیں۔

علاوہ ازیں بلوچستان میں مخلوط حکومت کے قیام پراتفاق کرلیا گیا ہے، بلوچستان عوامی پارٹی کے وفد نے بنی گالہ میں عمران خان سے ملاقات کی۔

وفاق میں پی ٹی آئی کی غیرمشروط حمایت کااعلان کرتے ہوئے جام کمال کا کہنا ہے کہ تحریک انصاف کے ساتھ اتحاد کیا ہے اور مطلوبہ حمایت بھی حاصل ہوگئی ہے۔

انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ اب صوبے میں تبدیلی آئے گی۔جہانگیر ترین کا کہنا ہے کہ بلوچستان میں ہمارے امیدوار جام کمال ہی ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں