The news is by your side.

Advertisement

بنی گالہ جانے کی کوشش کرتی تحریک انصاف کی خواتین کارکن گرفتار

اسلام آباد: تحریک انصاف کے کارکنوں کی گرفتاری کے بعد اسلام آباد پولیس نے خواتین کو بھی نہ چھوڑا اور مزاحمت کرنے والی خواتین کو برے طریقے سے گھسیٹ کر گرفتار کرلیا گیا۔

تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کے گھر جانے والے کارکنان پر پولیس بری طرح ٹوٹ پڑی۔ پہلے سینکڑوں کارکنان کو گرفتار کیا گیا اس کے بعد خواتین پولیس اہلکاروں کا بھی کریک ڈاؤن شروع ہوگیا اور انہوں نے خواتین کارکنان کو گرفتار کرنا شروع کردیا۔

بنی گالہ جانے کی کوشش کرتی ہوئی تحریک انصاف کی ایک با ہمت کارکن پولیس کے نرغے میں پھنس گئی۔ ہاتھ نہ لگانے کی وارننگ دی تو خواتین پولیس اہلکار نہتی کارکن پر جھپٹ پڑیں۔

تحریک انصاف کی کارکن کو گھسیٹتے ہوئے پولیس وین کی جانب لے جایا گیا۔ پولیس وین کے دروازے پر بھرپور مزاحمت ہوئی جس کے بعد مرد اہلکاروں کے قریب آنے پر خاتون چلا اٹھیں تاہم خواتین اہلکاروں نے انہیں گھسیٹ کر پولیس وین میں ڈال دیا۔

اس سے قبل پاکستان تحریک انصاف کی رہنما شیری مزاری کو بھی بنی گالہ جاتے ہوئے روکنے کی کوشش کی گئی تاہم انہوں نے شدید مزاحمت کی اور گاڑی سے اتر کر بیریئر ہٹانے کی کوشش کی، جس کے بعد پولیس نے بالآخر انہیں بنی گالہ جانے دے دیا۔

تھوڑی دیر قبل قومی اسمبلی کے رکن عارف علوی اور رہنما عمران اسماعیل کو بھی بنی گالہ جانے سے روکنے کی کوشش میں پولیس نے گرفتار کرلیا۔ دونوں رہنماؤں کو وین میں ڈال کر تھانہ سیکریٹرٹ منتقل کردیا گیا۔

تاہم کچھ دیر بعد ہی وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے تحریک انصاف کے دونوں رہنماؤں کی گرفتاری کا نوٹس لیتے ہوئے آئی جی اسلام آباد کو ان کی رہائی کا حکم دے دیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں