The news is by your side.

Advertisement

پی ٹی ایم گرفتار کارکنوں کی درخواست ضمانت مسترد

اسلام آباد: ریاست مخالف نعرے بازی پر پی ٹی ایم گرفتار کارکنوں کی درخواست ضمانت مسترد کردی گئی۔

تفصیلات کے مطابق ملزمان ملزمان کی فوج مخالف نعروں اور تقاریر کی ویڈیوز عدالت میں دکھائی گئیں، ریاست مخالف نعرے بازی، ملزمان کی درخواست ضمانت پر سماعت سیشن جج سہیل ناصر نے کی۔

عدالت کا کہنا تھا کہ ملزمان نے ریاست مخالف تقاریر اور نعرے بازی کی ہے، ملزمان کے خلاف دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج ہونا چاہئے۔

ملزمان کے خلاف تھانہ کوہسار میں مقدمہ درج ہے، مقدمہ منظور پشتین سمیت 28 افراد نامزد ہیں، مقدمے میں 27 افراد کو گرفتار کیا گیا تھا جو جیل میں ہیں، ملزمان کی جانب سے پریس کلب کے باہر ریاست مخالف تقریر کی گئی تھی۔

مزید پڑھیں: اہم پیشرفت: ریاست اور اداروں کے خلاف نعرے نہیں لگیں گے، پشتون تحفظ موومنٹ کی یقین دہانی

واضح رہے کہ پشتون تحفظ موومنٹ اور قبائلی عمائدین کے اراکین نے ایک اور جرگے کا اہتمام کیا جس میں معاملات کو حل کرنے کے لیے مختلف تجاویز پیش کیں گئیں۔

جرگے میں اتفاق کیا کہ پی ٹی ایم کےنام پر ریاست، ریاستی اداروں کیخلاف نعرے اور اُن کی ہرزہ سرائی کی اجازت دی نہیں جائے گی علاوہ ازیں سوشل میڈیا پر بھی کسی صورت ہرزہ سرائی کی اجازت نہیں ہوگی۔

خیال رہے کہ جرگے میں ہونے والی پیشرفت کے بعد پی ٹی ایم نے عید کے تیسرے روز رزمک میں ہونے والا جلسہ منسوخ کرادیا جبکہ قبائلی عمائدین اور پشتون تحفظ موومنٹ کے رہنماؤں کی اگلی بیٹھک 22 جون کو ہوگی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں