The news is by your side.

مفت حج کی سہولت ختم کرانے کا فیصلہ

اسلام آباد : پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے مفت حج کی سہولت ختم کرانے کا فیصلہ کرلیا اور مفت حج پر جانے والوں کی تمام تر تفصیلات طلب کرلیں۔

تفصیلات کے مطابق پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی جانب سے مفت حج کی سہولت ختم کرانے کا فیصلہ کرلیا گیا۔

چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ وزیر اعظم، وزرا یا کوئی سیاسی شخصیت مفت حج نہیں کرسکتی ، سرکاری افسران، خدام، معاونین کیلئے مفت حج کی سہولت ختم کی جائے۔

پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا کہنا تھا کہ کون کون مفت حج پر جاتا ہے تمام تر تفصیلات فراہم کی جائیں۔

چیئرمین کمیٹی نے مزید کہا کہ بیوروکریٹ اور سیاستدان یا افسر مفت میں حج حاصل نہیں کر سکتا، ہمیشہ کیلئے مفت میں حج کی سہولت کو ختم کیا جائے۔

کمیٹی نے متعلقہ وزارت،اے جی پی آر سے تفصیلات کیلئے 15 روز میں طلب کر لی، چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ جن سرکاری افسران کی فیملیز نے مفت حج کئے ان سے ریکوری ہوگی۔

چئیر مین پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نور عالم خان نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ مفت حج ختم ہوگا یہ پی اے سی کا وعدہ ہے، پاکستان قرضوں میں ڈوبا ہوا ہے یہاں ایسی سہولیات عوام پر بوجھ ہیں۔

نور عالم خان کا کہنا تھا کہ عام آدمی ٹیکس دیتا ہے ٹیکس سے پیسوں سے یہ حج پر جاتے ہیں، ایسے مفت میں حج ہوتا ہے نہ ہم مفت حج پر کسی کوجانے دیں گے۔

انھوں نے مزید کہا کسی وزیر سیکرٹری یا ایم این اے کی فیملیز گئی ہوں گی تو پیسے وصول ہونگے، وصولیاں کر کے رقم حکومت پاکستان کے خزانے میں جمع کروائی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں