site
stats
پاکستان

آئندہ مالی سال کیلئے صوبے پنجاب کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا

لاہور : حکومت پنجاب اپنا بجٹ آج پیش کر ے گی، بجٹ میں تنخوہواں میں دس فیصد اضافہ اور کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب کا صوبائی بجٹ آج پیش کیا جائے گا، بجٹ کا حجم 19 کھرب روپے متوقع ہے، بجٹ وزیرخزانہ پنجاب عائشہ غوث پیش کریں گی۔

آئندہ مالی سال کیلئےترقیاتی بجٹ کا حجم 635 ارب روپے مختص کیا گیا ہے، اسکول ایجوکیشن کے لئے 52 ارب 50کروڑ، ہائیر ایجوکیشن کے لئے20 ارب پچاس کروڑ اوراسپیشل ہیلتھ اینڈ میڈیکل ایجوکیشن کیلئے 30 ارب رکھے گئے ہیں۔

بجٹ میں توانائی کیلئےاٹھارہ ارب اور ہیلتھ انشورنس پروگرام کے لئے ڈیڑھ ارب روپے مختص کرنے کی تجویزہے۔

زرائع کے مطابق بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں دس فیصد اضافہ تجویز کیا گیا ہے، پنجاب حکومت نے اورنج لائن ٹرین کیلئے 93 ارب روپے، خادم اعلیٰ دیہی روڈ پروگرام کے لیے 18 ارب ،صاف پانی کیلئے 50 ارب ، اسکلزڈویلپمنٹ پروگرام کیلئے 9 ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے۔

پنجاب کڈنی لیور انسٹی ٹیوٹ کے لیے 10ارب اور اسپتالوں کی تعمیرو مرمت کے لیے 5 ارب مختص کئے جائیں گے۔

پنجاب حکومت اورغیر ملکی تعاون سے چلنے والی اسکیموں کے لیے 24 ارب جبکہ پنجاب ریونیواتھارٹی کیلئے 92 ارب روپے وصولی کا ہدف مقرر کئے جانے کی امید ہے۔

آئندہ مالی سال میں حکومت پنجاب گرین ٹیکسی اسکیم اورکسانوں کو بلاسودقرضے بھی فراہم کرے گی، عوام کا کہناہےکہ حکومت کو تعلیم اور صحت پر توجہ دینی چاہیے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top