site
stats
پاکستان

پنجاب حکومت نے10 خطرناک دہشت گردوں کےسرکی قمیت مقررکردی

Punjab govt

لاہور: محکمہ داخلہ پنجاب نے10 انتہائی خطرناک دہشت گردوں کے سرکی قیمت 3 کروڑ 5 لاکھ روپے مقررکردی، وفاقی حکومت پہلے ہی دہشت گردوں کے سرکی قیمت مقررکرچکی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب حکومت نے آئی پنجاب پولیس کی سفارش پر10 انتہائی خطرناک دہشت گردوں کے سر کی قیمت 3 کروڑ 5 لاکھ روپے مقررکی ہے۔

محکمہ داخلہ پنجاب کی جانب سے جاری فہرست میں 10 ملکی اورغیرملکی دہشت گرد شامل ہیں۔

پنجاب حکومت کے مطابق دہشت گردوں نے فوجی افسران، سیاست دانوں، مذہبی رہنماؤں، حساس تنصیبات سمیت مذہبی مقامات کو دہشت گردی کا نشانہ بنایا۔

محکمہ داخلہ پنجاب کی جانب سے جاری فہرست میں دہشتگرد عبدالولی عرف عمرخالد خراسانی اوراسد منصورعرف قاری سمیع اللہ کےسرکی قیمت 40،40 لاکھ روپے مقررکی ہے۔

دہشت گرد محمدخان عرف باچاخان عرف بادشاہ عرف محمد ولد نوربخش اور ہاشم خان عرف شوکت خان ولد معشوق خان کے سرکی قیمت بھی 40،40 لاکھ روپے مقررکی ہے۔

خطیب اللہ عرف انس عرف گلاب جان کے سرکی قیمت بھی 40لاکھ جبکہ محمدابراہیم ولدعجب خان کے سرکی قیمت 10لاکھ روپے مقرر کی ہے۔

دہشت گرد شعیب اقبال چیمہ ولد محمداقبال چیمہ اور محمداقبال عرف بالی کھارا ولداللہ وسایہ کے سرکی قیمت 25،25 لاکھ روپے مقررکی ہے۔

واضح رہے کہ پنجاب حکومت نے دہشت گرد محمداسماعیل عرف بنگالی عرف گگن ولداللہ بخش کے سرکی قیمت 40لاکھ جبکہ دہشت گرد اعتبارشاہ ولد حسین شاہ سکنہ کابل افغانستان کے سر کی قیمت 5 لاکھ روپے مقرر کی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

loading...

Most Popular

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top