The news is by your side.

Advertisement

سیل کئے جانے والے علاقوں میں رہائش پذیر ملازمت پیشہ افراد کی بڑی مشکل آسان ہوگئی

لاہور : پنجاب حکومت نے کورونا کے باعث سیل کئے جانے والے علاقوں میں رہائش پذیر ملازمت کرنے والے شہریوں کو سہولت فراہم کرتے ہوئے کہا رہائشیوں کوملازمتوں سےنہیں نکالاجائے گا اور نہ ہی تنخواہ میں کٹوتی ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب حکومت نے کورونا کے باعث سیل کئے جانے والے علاقوں کے رہائشیوں کے لئے بڑا اقدام اٹھاتے ہوئے ملازمت کرنے والے شہریوں کے لئے سہولت کا نوٹیفیکشن جاری کردیا

نوٹیفیکشن میں کہا گیا ہے کہ سیل ہونے والے علاقوں کے رہائشیوں کو چھٹی کی وجہ سے ان کی ملازمتوں سے نہیں نکالا جائے گا، نجی ادارے ایسے علاقوں میں مقیم اپنے ملازمین کو نہ تو نوکری سے نکالیں گے اور نہ ہی تنخواہ میں کٹوتی کریں گے۔

نوٹیفیکشن کے مطابق اگر کسی نجی ادارے ، دکان، فیکٹری یا مل مالک نے لاک ڈاؤن کیے جانے والے علاقوں میں رہائش پذیر ملازم کو چھٹی کرنے کے باعث نکالا تو ادارے کے خلاف کارروائی کی جائے۔

پنجاب حکومت کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کا اطلاق تمام مستقل، عارضی اور یومیہ اجرت کے ملازمین پر یکساں طور پہ ہوگا۔

یاد رہے کورونا وائرس کے پھیلاو کے خدشات کے پیش نظر شہر لاہور میں چھیاسٹھ سے زائد علاقوں کو سیل ہوئے آج سات واں روز ہے، عوام کو اندر باہر آنے جانے سے روکنے کے لئے پولیس کی بھاری نفری بھی تعینات ہے۔

پولیس کے افسران سیل کئے گئے علاقوں کا دورہ کرنے میں مصروف ہے جبکہ پولیس نے درجنوں افراد کے خلاف ایس او پی پر عمل نہ کرنے پر مقدمات بھی درج کئے۔

خیال رہے پنجاب میں کوروناکے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر مزید 7 بڑے علاقے مکمل سیل کرنے کی تجویز سامنے آئی، محکمہ صحت، ضلعی انتظامیہ اور محکمہ داخلہ حتمی فیصلہ کرے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں