ناصر درّانی کے کام میں کوئی رکاوٹ نہیں تھی، فیاض الحسن چوہان -
The news is by your side.

Advertisement

ناصر درّانی کے کام میں کوئی رکاوٹ نہیں تھی، فیاض الحسن چوہان

لاہور: وزیرِ اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے ناصر درانی کے انتظامیہ کے ساتھ اختلافات کی بات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ چیئرمین پنجاب پولیس ریفارمز کے کام میں کوئی رکاوٹ نہیں تھی۔

اے آر وائی نیوز کے پروگرام آف دی ریکارڈ میں بات کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ناصر درّانی اپنے ذاتی معاملات کے باعث مستعفی ہوئے ہیں، صحت کا معاملہ بھی ذات سے متعلق ہی ہوتا ہے۔

وزیرِ ہاؤسنگ محمود الرشید کے بیٹے کو پھنسایا گیا: فیاض الحسن

فیاض الحسن چوہان نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کو پاکستان کی سیاست پر داغ قرار دیتے ہوئے کہا کہ شہباز شریف کی نام نہاد گورننس سانحے کی تفتیش میں رکاوٹ بنی ہوئی تھی۔

پنجاب کے وزیرِ اطلاعات نے مزید کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ملوث افسران کو سزا ملنی چاہیے۔ یاد رہے کہ گزشتہ روز انسدادِ دہشت گردی عدالت نے سابق آئی جی مشتاق سکھیرا پر فردِ جرم عائد کر دی ہے۔

فیاض الحسن نے وزیرِ ہاؤسنگ محمود الرشید کے بیٹے کے کیس کے حوالے سے کہا کہ بیٹا دوست کو چھڑانے گیا تو پولیس نے اسے بھی پکڑ لیا، ان کے بیٹے کو پھنسایا گیا، محمود الرشید کے بیٹے سے متعلق معاملہ مختلف تھا۔


یہ بھی پڑھیں:  چیئرمین پنجاب پولیس ریفارمز ناصردرانی نے استعفیٰ دے دیا


خیال رہے کہ پولیس نے میاں محمود الرشید کے بیٹے کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا جس کے متن کے مطابق میاں حسن نے مبینہ طور پر اہل کاروں کو تشدد کے بعد اغوا کیا تھا، ملزمان نے اہل کاروں سے اسلحہ اور وائرلیس چھین کر پھینک دیے۔

فیاض الحسن چوہان کا کہنا تھا کہ چیف سیکریٹری، سیکریٹری داخلہ کے تبادلے بھی ہوئے ہیں، الیکشن کمیشن نے باقی تبادلوں پر تو کوئی ایکشن نہیں لیا تھا۔ یاد رہے کہ گزشتہ روز وزیرِ اعلیٰ پنجاب، کلیم امام اور احسن جمیل نے ڈی پی او پاکپتن تبادلہ کیس میں سپریم کورٹ سے معافی مانگ لی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں