The news is by your side.

Advertisement

دھماکے میں ملوث افراد کا تعلق وزیرستان اورننگرہار سے تھا‘ رانا ثنا اللہ

لاہور: صوبائی وزیر قانون رانا ثنا اللہ کا کہنا ہے کہ کچھ لوگ منفی پروپیگنڈا کر رہےہیں، پنجاب میں آپریشن ہورہا ہے، پولیس،رینجرزاورفوج مشترکہ کومبنگ آپریشن کرتے ہیں.

پنجاب کے وزیر قانون رانا ثنا اللہ کا کہنا ہے کہ دھما کے میں ملوث افراد کا تعلق وزیر ستان اور ننگرہار سے تھا، سی سی ٹی وی کیمروں میں ریکارڈ افراد کے خدوخال بھی ویسے ہی ہیں، جس کی مد د سے متعدد افراد کو گرفتار کیا گیا ہے، جبکہ ایک سے دو روز میں مزید تفصیلات سامنے آجائیں گی۔

مزید پڑھیں:لاہور دھماکا: ڈی آئی جی ٹریفک اور ایس ایس پی سمیت 13 شہید، 70 زخمی

صوبائی وزیر نے کہا کہ انٹیلی جنس ایجنسیوں نے مؤثر کام کیا تھا، نیکٹا کی جانب سے ناخوشگوار واقعے کا ہائی الرٹ جاری کردیا گیا تھا ، ہمارے انٹیلی جنس ادارے الرٹ ہیں.

پنجاب میں رینجرز آپریشن کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پنجاب میں رینجرز آپریشن2 سال سے ہو رہا ہے اس کے علاوہ جنوبی پنجاب میں بھی آپریشن ہورہےہیں، پولیس،رینجرزاورفوج مشترکہ کومبنگ آپریشن کرتے ہیں.

رانا ثنا اللہ نے مزید کہا کہ پنجاب میں آپریشن ہورہا ہے ،کچھ لوگ منفی پروپیگنڈا کر رہےہیں،صوبے کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے انہوں نے کہا کہ لاہور سمیت پنجاب کے6 بڑے شہروں میں سیف سٹی پراجیکٹ لگائیں گے، یہ پراجیکٹ مئی تک مکمل ہوجائیں گے.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں