لاہور: پنجاب پولیس اے ٹی ایم فراڈ میں ملوث نکلی punjab police
The news is by your side.

Advertisement

لاہور: پنجاب پولیس اے ٹی ایم فراڈ میں ملوث نکلی

لاہور: پنجاب کے دارالحکومت میں اے ٹی ایم فراڈ کے ذریعے لوگوں کی رقم لوٹنے میں مبینہ طور پر پولیس اہلکار ہی ملوث نکلے، حراست کے دوران نوجوان کے بینک اکاؤنٹ سے لاکھوں روپے نکل گئے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور میں کراچی طرز کےاے ٹی ایم بینک فراڈ کا انکشاف ہوا ہے جس میں مبینہ طور پر پولیس اہلکار کے ملوث ہونے کی ویڈیو سامنے آگئی۔

لاہور کے علاقے نواں کوٹ سبزہ زار میں 31 جنوری کو پولیس نے نجی تقریب میں چھاپہ مار کر متعدد مرد اور خواتین کو گرفتار کیا اور اُن کے پاس سے برآمد ہونے والے لاکھوں روپے کیش، موبائل فونز، شناختی کارڈز اور اے ٹی ایم کارڈز اپنے قبضے میں لیے۔

مزید پڑھیں: کراچی، اے ٹی ایم ڈیٹا چوری کرنے والا چینی باشندہ رنگے ہاتھوں گرفتار

حراست میں لیے جانے والے ملزمان نے عدالت سے اپنی ضمانت کروائی اور مذکورہ چیزوں کی واپسی کے لیے تھانے سے رجوع کیا تو پولیس نے سپرداری کروانے کا مشورہ دیا، 2 روز بعد جب ملزمان اپنی چیزیں واپس لینے تھانے پہنچے تو ڈیوٹی پر تعینات افسر نے 2 ہزار روپے رشوت طلب کی۔

درخواست گزار کے مطابق جیسے ہی موبائل فونز آن کیےتو بنک سے میسیج آیا کہ آپ کے اکاؤنٹ سے 3 لاکھ 28 ہزار روپے نکل چکے ہیں، مذکورہ شخص کا کہنا ہے کہ سرگودھا اور خوشاب کے اے ٹی ایم سے ڈیڑھ لاکھ روپے دوسرے اکاؤنٹس میں ٹرانسفر جبکہ ایک لاکھ 78 ہزار روپے کیش نکلوایا گیا۔

متاثرہ شخص نے جب بینک سے رابطہ کیا تو مقررہ برانچز کی سی سی ٹی وی سامنے آئیں جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ایک شخص اے ٹی ایم میں داخل ہوکر کیش نکال رہا ہے اور اُس نے اس دوران اپنا منہ چھپایا ہوا تھا۔

متاثرہ شہری کی درخواست پر سی سی پی او لاہور امین وینس نے ایس پی اقبال ٹاؤن کو تحقیقات کرنے کی ہدایت کی اس دوران پولیس اہلکاروں نے اعتراف کیا کہ ملزمان کے اے ٹی ایم کارڈ تحویل میں تھے۔

یہ بھی پڑھیں: ہیکرز نے اے ٹی ایم صارفین کے لاکھوں روپے لوٹ لیے، 600اکاؤنٹس خالی

ایس پی عمرفاروق کا کہنا تھا  کہ بنکوں سے ریکارڈ منگوا کر فیصلہ میرٹ پر کیا جائے گا۔

شہریوں نے اس واقعے پر کئی سوالات کھڑے کردیے، اُن کا کہنا ہے کہ زیر حراست افراد کے اے ٹی ایم پن کوڈ کیسے ہیک کیے گئے؟ کیا پولیس نے ہیکرز کا کوئی گینگ بنا رکھا ہے؟۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔ 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں