The news is by your side.

Advertisement

سندھ کے بعد پنجاب میں بھی بازار رات 9 بجے بند کرنے کا فیصلہ

لاہور : سندھ کے بعد پنجاب میں بھی بازار رات نو بجے بند کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ، تاہم ریسٹورنٹ اورہوٹل جلد بند کرنے پر غور جاری ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے بعد پنجاب میں بھی بجلی بچت پلان پر عمل کا فیصلہ کرلیا گیا ، ذرائع کا کہنا ہے کہ اس حوالے سے تاجر تنظیموں اور چیمبرز سے مشاورت مکمل کر لی گئی ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ آئندہ ہفتے سے پنجاب میں بجلی بچت پلان پر عمل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ، پنجاب بھرمیں بازارجلد کھولے جائیں گے اور رات 9 بجے بند ہو جائیں گے۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ فارمیسی ،بیکری ،پیٹرول پمپس کو استثنیٰ حاصل ہوگا تاہم ریسٹورنٹ اورہوٹل جلد بند کرنے پر غور جاری ہے ، پہلے مرحلے میں پابندی 2ماہ کےلیےہو گی ، جولائی اور اگست کے بعد مزید فیصلہ ہو گا۔

لاہورچیمبر نے قومی مفاد کے فیصلوں پر حکومت کا ساتھ دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا بچت پلان پر عمل سے بجلی پٹرول بچے گا ،اس وقت پیٹرول اور بجلی بچانا قومی فریضہ ہے ، عوام کم سے کم بجلی استعمال کریں۔

گذشتہ روز سندھ حکومت نے مارکیٹس، بازار اور شاپنگ مالز رات 9 بجے بند کرنے کا حکم دیا تھا، محکمہ داخلہ سندھ نے مارکیٹس،بازار،دکانیں،شاپنگ مالز رات 9 بجے بند کرنے کے احکامات جاری کئے۔

محکمہ داخلہ سندھ کا کہنا تھا کہ شادی ہالز،بینکویٹس رات10:30بجے تک بندکرنے ہوں گے تاہم میڈیکل اسٹورز، اسپتال، پٹرول پمپس اور سی این جی اسٹیشنزپابندی سے مستثنیٰ ہوں گے۔

نوٹی فیکیشن کے مطابق ہوٹلز،ریسٹورنٹس،کافی شاپس ،کیفے شب 11:00بجے تک کلوزکرنا ہوں گے ، دفعہ 144پر عملدرآمد کا آغاز 17جون شام 5 بجے سے ہوجائے گا اور پابندی کے اوقات 16 جولائی 2022 تک نافذ العمل رہیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں