The news is by your side.

Advertisement

میگا منی لانڈرنگ کیس : قائم علی شاہ کو گرفتاری کا خوف

اسلام آباد : سابق وزیر اعلی سندھ قائم علی شاہ نے گرفتاری سے بچنے کے لئے اسلام آباد ہائی کورٹ سے رجوع کرلیا، جس میں کہا گیا منی لانڈرنگ سے کوئی لینا دینا نہیں سیاسی بنیادوں پر نام شامل کیا گیا، گرفتار نہ کیاجائے۔

تفصیلات کے مطابق میگا منی لانڈرنگ میں گرفتاری کا خوف سے سابق وزیر اعلی سندھ قائم علی شاہ نے عدالت سے رجوع کرلیا۔

سابق وزیر اعلی قائم علی شاہ نے ضمانت قبل از گرفتاری کے لئے اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر کردی، قائم علی شاہ نے ملک جاوید اقبال ایڈوکیٹ کے ذریعے اسلام آبادہائیکورٹ میں درخواست دائرکی، درخواست رجسٹرار آفس نے وصول کرلی ہے۔

درخواست میں چیئرمین نیب ڈی جی نیب اور تفتیشی افسر نے سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا۔

درخواست مؤقف اختیار کیا گیا درخواست گزار کا منی لانڈرنگ سے کوئی لینا دینا نہیں سیاسی بنیادوں پر نام شامل کیا گیا اور استدعا کی جب تک کیس کی سماعت مکمل نہیں ہوجاتی قائم علی شاہ کو گرفتار نہ کیا جائے۔

یاد رہے نیب نے سابق وزیراعلیٰ سندھ قائم علی شاہ کو 27 مارچ کو طلب کر لیا، قائم علی شاہ کو ٹھٹھہ اور دادو شوگر ملز کیس میں طلب کیا گیا اور ولڈ نیب ہیڈکوارٹرز میں پیش ہونے کی ہدایت کی گئی ہے۔

مزید پڑھیں : سنا ہےنیب کواوپر سےحکم ہےبڑی مچھلی پکڑو، میں تو چھوٹاآدمی ہوں، قائم علی شاہ

نیب کی جانب سے ٹھٹھہ شوگر مل سے متعلق تمام ریکارڈ بھی ہمراہ لانے کی ہدایت جاری کی گئی ہے۔

خیال رہے جعلی اکاؤنٹس کیس میں وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ بیان ریکارڈ کرانے نیب ہیڈکوارٹرز پہنچے، نیب کی 6رکنی ٹیم وزیراعلیٰ سندھ سے ٹھٹھہ، دادو شوگرملز کیس میں پوچھ گچھ کر رہی ہے۔

تحقیقاتی ٹیم کےسربراہ ڈی جی نیب عرفان منگی خود بیان ریکارڈ کررہے ہیں جبکہ مراد علی شاہ کو تحریری سوال نامہ بھی دیا جائے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں