The news is by your side.

Advertisement

بھولنے کی عادت برقرار،قائم علی شاہ کے استعفیٰ میں تحریری غلطی

کراچی : سندھ کے وزیر اعلیٰ سید قائم علی شاہ نے اپنا استعفیٰ گورنر کو جمع کرادیا جسے فوری طور پر منظور کر لیا گیا ہے تا ہم ہاتھ سے لکھے استعفیٰ میں سال غلط لکھ دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت کی ہدایت پر عمل کرتے ہوئے سندھ کے وزیر اعلیٰ سید قائم علی شاہ نے اپنا استعفیٰ گورنر ہاؤس میں الدوداعی ملاقات کے دوران گورنر سندھ کو پیش کردیا،جسے گورنر سندھ نے فوری طور پر منظور کر لیا اس موقع پر پیپلز پارٹی صوبہ سندھ کی اعلیٰ قیادت بھی موجود تھی۔

Qaim Mistake

یہ خبر پڑھیے : سندھ میں نئے وزیر اعلیٰ کے انتخاب کے لیے شیڈول جاری

ذرائع کے مطابق بھولنے کے عادت کے حوالے سے مشہور وزیر اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ اپنے پاتھ سے تحریر کیے گئے استعفیٰ میں بھی درست سال درج کرنا بھول گئے اور استعفیٰ میں ایک جگہ سال 2016 کے بجائے 201 لکھ دیا ہے،یہ تحریری غلطی گورنر سندھ کی نظر سے بھی گئی اور انہوں نے اسی استعفیٰ کو منظور بھی کر لیا۔

یہ بھی پڑھیے : وزیر اعلی سندھ قائم علی شاہ کو تبدیل کرنے کا فیصلہ

واضح رہے پیپلزپارٹی کی جانب سے مراد علی شاہ کو سندھ کا نیا وزیراعلیٰ نامزد کیاگیا ہے جو اپنی کابینہ کے ہمراہ جمعہ کو ہی اپنے عہدے کا حلف اٹھائیں گے، ان کی حلف برداری کی تقریب گورنر ہاؤس میں ہوگی جہاں گورنر سندھ ڈاکٹرعشرت العباد خان ان سے حلف لیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں