The news is by your side.

Advertisement

ضیا کے مارشل لا نے دہشت گردی، فرقہ واریت و لسانیت کو جنم دیا، کائرہ

لاہور: پاکستان پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر قمرکائرہ نے کہا ہے کہ ضیا الحق کے مارشل لا نے دہشت گردی، فرقہ واریت اورلسانیت کوجنم دیا۔

یہ بات انہوں نے پیپلزپارٹی پنجاب کی جانب سے 5 جولائی 1977 کو ضیاء الحق کی جانب سے منتخب حکومت کی بساط لپیٹنے اور مارشل لا نافذ کرنے کے خلاف نکالی گئی احتجاجی ریلی سے ناصر باغ میں خطاب کرتے ہوئے کہی، پیپلز پارٹی نے آج یوم سیاہ بھی منایا۔

قمرزمان کائرہ کا کہنا تھا کہ ہماری بہن بیٹیوں کو تھانوں میں مرد قیدیوں کے ساتھ بند کیا تھا اورعدالتوں کے چکر لگوائے گئے لیکن آپ کے منہ سے دو بول ہمدردی کے نہیں نکلے لیکن آج آپ کی صاحبزادی کو جے آئی ٹی میں طلب کیا گیا تو آپ کو مشرقی روایات اور بہن بہو بیٹی کی عزت یاد آ گئیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ بے نظیر کے خلاف آپ نے مقدمات بنائے، ایک عدالت سے دوسری عدالت میں گھسیٹا، ایک شہر سے دوسرے شہر پیشیوں پر بلایا گیا اور حد تو یہ کہ انہیں سی کلاس جیل میں رکھا گیا تب کسی کی حمیت نہ جاگی۔

قمر زمان کائرہ نے کہا کہ حکمرانوں کے چہروں پر گھبراہٹ بتا رہی ہے کہ یہ پاناما کیس ہارچکے ہیں اور عدالت موجودہ حکمرانوں کے خلاف فیصلہ دینے والی ہے جس سے ان کے اوسان خطا ہو رہے ہیں اب یہ لوگ آئندہ انتخابات میں بھی ناکام ہوں گے۔

خیال رہے کہ آج سے 40 سال قبل اس وقت کے چیف آف آرمی اسٹاف *جنرل ضیاء الحق نے پاکستان پیپلز پارٹی کی منتخب حکومت کا تختہ الٹ * کر ملک میں مارشل لا نافذ کردیا تھا اور وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو کو حراست میں لے لیا گیا تھا جنہیں بعد ازاں قتل کے ایک مقدمے میں پھانسی دے دی گئی تھی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں