The news is by your side.

فیفا ورلڈ کپ: مراکشی کھلاڑیوں کا فلسطینی پرچم کے ساتھ جیت کا جشن

دوحا: مراکش کی فٹبال ٹیم نے دو ہزار دس کی عالمی چیمپئن اسپین کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد شکست دے کر فلسطینی پرچم کے ساتھ اپنی تاریخی جیت کا جشن منایا۔

گزشتہ روز دوحا کے ایجوکیشن سٹی اسٹیڈیم میں کھیلے گئے پری کوارٹرفائنل میں مراکش اوراسپین مدمقابل آئیں، دونوں ٹیمیں مقررہ اوراضافی وقت میں کوئی گول نہ کرسکیں۔
میچ کا فیصلہ پنالٹی شوٹ آؤٹ پرہوا، جہاں مراکش کے گول کیپر نے یکے بعد دیگرے اسپین کے تین گول روک کر اپنی ٹیم کو فیفا ورلڈکپ کی تاریخ میں پہلی بار کوارٹر فائنل میں جگہ دلائی۔

مراکش کی تاریخی کامیابی پر پورے اسٹیڈیم میں جشن کا سماں رہا، مراکشی کھلاڑیوں نے سپورٹ کرنے پر شائقین فٹ بال کا شکریہ ادا کیا، بعد ازاں کھلاڑی نے سجدہ شکر بھی ادا کیا۔

مراکش اب چوتھی افریقی اور پہلی عرب ٹیم ہے جس نے کوارٹر فائنل میں کوالیفائی کیا، اس سے قبل تین افریقی ممالک (1990 میں کیمرون، 2002 میں سنیگال اور 2010 میں گھانا) نے کوارٹر فائنل میں کوالیفائی کیا تھا۔

میچ ختم ہونے کے بعد مراکش ٹیم کے منیجر نے کہا کہ یہ ایک بہٹ بڑی کامیابی ہے ہمارے کھلاڑی پُرجوش ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ اس قدر بڑی کامیابی ہے کہ مجھے ہمارے بادشاہ نے میچ کے بعد مبارکباد دینے کے لیے فون کیا، انہوں نے ہماری حوصلہ افزائی کی اور اگلے مرحلے میں ٹیم کو پوری جان لگانے کا مشورہ دیا۔

مراکش کے فٹبالرز جیت کے موقع پر شائقین سمیت کھلاڑیوں نے عرب یکجہتی کے اظہار میں فلسطینی پرچم اٹھایا ہوا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں