site
stats
اے آر وائی خصوصی

مرحوم والدین کی نمازوں کی قضا اورفدیہ کیسے دیا جائے؟

کراچی : مرحوم والدین کی قضا نمازیں اولاد کس طرح ادا کرے یا اس کا فدیہ کیسے ادا کیا جائے، اس حوالے سے علماء کرام کا کہنا ہے کہ وہ نمازیں اولاد کو ادا کرنی چاہئیں اور بصورت دیگر اس کا فدیہ ادا کرے۔

اسی طرح جو نماز اور روزے والدین سفرمیں ہونے کی وجہ سے نہ رکھ سکے ہوں اس کی قضا بھی اولاد پر لازم ہے۔ اس کے علاوہ ان نمازوں کا فدیہ بھی دیا جاسکتا ہے۔


Waldain Ki Qaza Namazoon Ko Kese Bakhshwaya Jaye by aryqtv

اس کا طریقہ یہ ہے کہ والدہ کی عمر میں سے نو سال یا پندرہ سال کم کرکے ان کی عمر کا تعین کیا جائے اوراس گمان کے ساتھ کہ انہوں نے کتنے سال نمازیں ادا کی ہیں وہ منہا کرکے باقی رہ جانے والے سالوں کی نمازوں کا فدیہ ادا کردیا جائے۔

اسی طرح والد کی عمر میں سے بھی بارہ یا پندرہ سال نکال کر ان کی بھی عمر کا تعین کر لیا جائے، فدیہ کا اصول یہ ہے کہ ایک دن میں نمازعشاء کے وتر واجب ملا کر کل چھ نمازیں بنتی ہیں اور ایک نماز کا فدیہ سو روپے کے لگ بھگ ہے۔

اس حساب سے ایک دن کی نماز کا فدیہ چھ سو روپے بنتا ہے اب اس رقم کو اتنے سالوں سے ضرب دے کر فدیہ ادا کر دیا جائے، واللہ اعلم بالصواب

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top