The news is by your side.

Advertisement

سانحہ کوئٹہ پر ملک بھر کی فضا سوگوار، ہر آنکھ پُر نم

کوئٹہ: سانحہ پولیس ٹریننگ سینٹر کے خلاف ملک بھر یوم سوگ منایا جارہا ہے، لاہور کراچی سمیت مختلف شہروں میں پرچم سرنگوں اور وکلاء برادری نے سانحہ کے خلاف عدالتی کارروائی کا بائیکاٹ کیا۔

ملک بھر کی طرح کوئٹہ دوسرے روز بھی سوگ میں ڈوبا ہوا ہے، صوبائی حکومت کے تین روزہ سوگ کے اعلان پر آج بھی بلوچستان اسمبلی سمیت تمام سرکاری عمارتوں پر پرچم سرنگوں ہے، المناک سانحہ میں شہید ہونے والے جوانوں اور ان کے لواحقین کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لئے کوئٹہ انجمن تاجران کیجانب سے آج شہر بھر میں شٹرڈاون ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔

شہر بھر کے تمام چھوٹے بڑے کاروباری اور تجارتی مراکز بند ہیں جبکہ سڑکوں پر ٹریفک نہ ہو کے برابر ہے، کوئٹہ انجمن تاجران نے سانحہ پولیس ٹریننگ سینٹر کے خلاف شہر میں شٹرڈوان ہڑتال کردی ہے، شہداء کے لئے شہر بھر میں دعائیہ تقریبات کا انعقاد بھی کیا جارہا ہے۔

سندھ میں پولیس ٹریننگ سینٹر کے شہداء سے لواحقین سے اظہار یکجہتی کے لئے یوم سوگ منایا جارہا ہے ، وزیراعلٰی ہاوس سمیت تمام سرکاری عمارتوں پر پرچم سرنگوں ہے، کراچی کے تعلیمی اداروں میں سانحہ کوئٹہ کے شہداء کے لئے دعائیہ تقریبات کا انعقاد کیا گیا، اس موقع پر طلباء کا جذبہ قابل دید تھا۔

سانحہ کوئٹہ کے خلاف ملک بھر میں وکلاء ہڑتال کررہے ہیں، وکلاء ہائیکورٹس سمیت ، ماتحت عدلیہ میں وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے اور بازووں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر احتجاج کرینگے۔


مزید پڑھیں : کوئٹہ پولیس ٹریننگ سینٹر پر حملہ، 61 اہلکار شہید، 118 زخمی


پاکستان بار کونسل کے وائس چیئر مین ڈاکٹر محمدفروغ نسیم نے سانحہ کوئٹہ میں شہید ہونے والوں کے لواحقین سے اظہار تعزیت اور زخمی ہونے والوں کے ساتھ اظہار ہمدردی کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ حکومت شہریوں کی جان و مال کی خاطر خواہ اقدامات کرے ۔

ایبٹ آباد میں تحریک صوبہ ہزارہ کی جانب سے دعائیہ تقریب کا انعقاد کیا، قائد تحریک صوبہ ہزارہ حیدرزمان کی جانب سے سانحہ کوئٹہ کی شدید الفاظ میں مذمت کی گئی، انکا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے پوری قوم کوپاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ مل کر مقابلہ کرنا ہوگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں