کوئٹہ: بس دھماکے کا مقدمہ سریاب تھانے میں نامعلوم افراد کیخلاف درج -
The news is by your side.

Advertisement

کوئٹہ: بس دھماکے کا مقدمہ سریاب تھانے میں نامعلوم افراد کیخلاف درج

کوئٹہ : بس میں دھماکے کا مقدمہ سریاب تھانے میں نامعلوم افراد کے خلاف درج کرلیا گیا ہے، دھماکے میں گیارہ افراد موت کی نیند سوگئے تھے، شہر کی فضا سوگوار ہے، جاں بحق افراد کی تدفین کا عمل بھی جاری ہے۔

کوئٹہ میں دہشت گردوں نے ایک پھر معصوم شہریوں کو خون میں نہلادیا، شہر کے وسطی علاقے سے سریاب کسٹم کی جانب جانے والی بس سریاب اوورہیڈ برج کے قریب پہنچی ہی تھی کہ اس میں زور دار دھماکا ہوگیا.

سانحے کے بعد شہر کی فضاسوگوارہے، کاروباری سرگرمیاں متاثرہیں، ٹریفک کی روانی بھی معمول سے کم ہے جبکہ مختلف علاقوں میں جاں بحق افرادکی تدفین کی جارہی ہے، سانحے میں دوبچوں سمیت تئیس افراد زخمی ہوئے، جنہیں مختلف اسپتالوں میں طبی امداد دی جارہی ہے۔

سیکرٹری داخلہ بلوچستان اکبر حسین درانی کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں کا ہدف کیا تھا اس کی تحقیقات جاری ہے، انہوں نے کہا کہ امکان ہے دہشت گرد بس کے ذریعے دھماکا خیز مواد ایک سے دوسری جگہ منتقل کررہے تھے.

بم ڈسپوزل اسکواڈ کے مطابق دھماکے میں پانچ سے چھ کلو گرام بارودی مواد استعمال کیا گیا.

وزیراعلیٰ بلوچستان ڈاکٹر عبدالمالک بلوچ کی جانب سے بس بم دھماکے میں جاں بحق افراد کےلواحقین کے لئے فی کس 10لاکھ، شدید زخمیوں کے لئے فی کس پانچ لاکھ جبکہ دیگر زخمی افراد کے لئے ایک ایک لاکھ روپے امداد کا اعلان کیا گیا ہے.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں