The news is by your side.

Advertisement

کوئٹہ دھماکہ کا ہدف آئی جی آفس تھا، گاڑی کراچی میں رجسٹرڈ ہے

کوئٹہ : شہدا چوک پر دھماکے میں پچھتر کلو بارودی مواد استعمال ہوا۔ جس کار سے دھماکا کیا گیا وہ کراچی میں رجسٹرڈ تھی۔ سیکریٹری داخلہ کا کہنا ہے دہشت گردوں کا ہدف آئی جی آفس تھا۔

کوئٹہ میں خوفناک دھماکے کے بعد سیکیورٹی حکام نے جائے وقوعہ کو گھیرے میں لے کر شواہداکٹھے کرناشروع کیے، سیکریٹری داخلہ بلوچستان بھی شہدا چوک آئے۔

انہوں نےانکشاف کیا کہ دہشت گردوں کاممکنہ ہدف آئی جی آفس تھا۔ خودکش حملہ آور اندرگھس کر تباہی مچانا چاہتاتھا، آئی جی ایف سی میجرجنرل ندیم انجم بھی جائےوقوعہ پرپہنچے۔

ابتدائی رپورٹ میں دھماکہ خودکش قراردیا گیاہے، گاڑی میں پچھتر کلو دھماکا خیز مواد موجود تھا جس میں نٹ بولٹ اوربال بیرنگ استعمال کیے گئے۔


مزید پڑھیں : کوئٹہ:جناح چیک پوسٹ کےقریب دھماکہ‘11افرادجاں بحق


دھماکے میں تباہ ہونےوالی گاڑی کی نمبر پلیٹ درست حالت میں ہے گاڑی کانمبر،ٹی۔فور تھری ڈبل سیون ہےجو کراچی میں رجسٹرڈ ہے گاڑی کورنگی فائیو بی کے رہائشی جمیل الرحمان کے نام پر ہے۔

انیس سو چھیاسی ماڈل کی گاڑی کاٹیکس آخری بارسال دوہزارآٹھ میں جمع کیاگیا اے آر وائی نیوز کی خبر پرآئی جی سندھ نے نوٹس لیتے ہوئے ڈی آئی جی ایسٹ سے گاڑی کی تفصیلات طلب کرلی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں