The news is by your side.

Advertisement

کوئٹہ میں گانگو وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد 15 ہوگئی

کوئٹہ : کانگو وائرس سے لوگ خوفزدہ ہیں اور انتظامیہ اس پرقابو پانے میں ناکام نظر آرہی ہیں، آج ایک اور مریض کو اسپتال لایا گیا ہے۔ اب تک پندرہ افراد جان سے جاچکے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق عید قربان کی تیاریاں جاری ہے جبکہ کوئٹہ میں گانگو وائرس شہریوں کے لئے خطرہ بن گیا ہے، کوئٹہ میں آج پھر ایک اور مریض اسپتال میں داخل کرایا گیا، کانگو وائرس کا شکار پچاس سالہ دارو خان کا تعلق ضلع دشت تیرہ میل سے ہے، دارو خان کو شدید بخار اور منہ سے خون آنے کی شکایت پر اسپتال لایا گیا، اسپتال میں گانگو وائرس کی تصدیق ہوگئی ہے۔

گزشتہ روز بھی کوئٹہ کے سرکاری اسپتال میں کانگو وائرس میں مبتلا ایک اور مریض کو داخل کرایا گیا، پشین کے رہائشی اجمل خان کو ناک اور منہ سے خون آنے کی شکایت پر اسپتال منتقل کیا گیا۔


مزید پڑھیں : کوئٹہ : کانگو وائرس میں مبتلا ایک اور شخص اسپتال میں داخل


کوئٹہ میں اب تک ایک سو دو مریضوں کو اسپتال لایا جاچکا ہے، ان میں سے انتیس میں کانگووائرس کی تصدیق ہوئی جبکہ پندرہ افراد جان کی بازی ہارچکے ہیں۔

اسپتال انتظامیہ کے مطابق کانگووائرس کےمرض کی تشخیص کوئٹہ میں ممکن نہیں جس کی وجہ سے مریضوں کا مشکلات کا سامناہے، مریض کو تشخیص کیلئے کراچی بھجوایا جاتا ہے۔

جانور سے منتقل ہونے والے اس وائرس سے بچنے کیلئے انتظامیہ نے شہریوں کو مویشی منڈی جانے میں احتیاط کا مشورہ دیا ہے ۔


مزید پڑھیں : کانگو وائرس: علامات اور احتیاطی تدابیر


کوئٹہ کے شہریوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کانگووائرس مرض کی تشخیص کوئٹہ میں سہولت فراہم کی جائے، واقعات کے بعد کانگو وائرس سے بچاؤ کے لئے مویشیوں کے باڑوں اور منڈیوں میں اسپرے اور ویکسینیشن مہم شروع کردی گئی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں