site
stats
پاکستان

منشیات اسمگلنگ میں ملوث کوئٹہ پولیس کا افسر ساتھیوں سمیت گرفتار

بدین: کوئٹہ پولیس کے حاضر سروس ڈی ایس پی کو منشیات اسمگل کرتے ہوئے اپنے ساتھیوں سمیت بدین پولیس نے گرفتار کرلیا۔ دی ایس پی کا آج ریمانڈ لیا جائے گا۔

تفصیلات کےمطابق بدین پولیس نے گزشتہ شب رات 1 بجے کے قریب بدین بائی پاس پر اسنیپ چیکنگ کے دوران کراچی سے آنے والی ویگو نمبر ایچ آر 4441 کو رکنے کا اشارہ کیا۔

پولیس کی جانب سے اشارہ دیے جانے کے باوجود ڈی ایس پی کوئٹہ پولیس ہیڈ کوارٹر مولا بخش لاشاری، جو کہ ویگو ڈرائیو کر رہے تھے نے پولیس کو چکمہ دے کر گاڑی نکالنے کی کوشش کی۔

بدین پولیس نے بروقت ناکہ بندی کر کے گاڑی کو روک لیا جس میں سے 2 من چرس برآمد ہوئی۔ پولیس کے مطابق ڈی ایس پی کوئٹہ مولا بخش لاشاری حاظر سروس پولیس افسر ہیں۔

پولیس حکام کےمطابق ڈی ایس پی کوئٹہ کے ساتھ ان کے 3 ساتھی بلال لاشاری، نبی بخش لاشاری اور مولا داد رند بھی گرفتار ہوئے ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ تمام ملزمان کا تعلق ضلع نواب شاہ سے ہے اور یہ تمام افراد منشیات کے بڑے ریکٹ کا حصہ ہیں جو کہ ملک کے مختلف علاقوں میں منشات کی ڈیلیوری دیتا اور پیسے وصول کرتا ہے۔

واضح رہے کہ بدین میں پکڑی جانے والی چرس کی مالیت 2 کروڑ روپے سے زائد ہے۔ ملزمان پر 4 مقدمات درج کر لیے گئے ہیں جبکہ انہیں آج سیشن کورٹ میں پیش کر کے 14 دن کے ریمانڈ کی استدعا کی جائے گی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top